احتجاج کے دوران پولیس کی فائرنگ سے زخمی ہونیوالاشخص چل بسا،اہلخانہ غم سے نڈھال

احتجاج کے دوران پولیس کی فائرنگ سے زخمی ہونیوالاشخص چل بسا،اہلخانہ غم سے ...
احتجاج کے دوران پولیس کی فائرنگ سے زخمی ہونیوالاشخص چل بسا،اہلخانہ غم سے نڈھال

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) کراچی میں احتجاج کے دوران پولیس کی فائرنگ سے زخمی ہونیوالا شخص جاں بحق ہوگیا ،اہلخانہ موت کی خبر ملتے ہی غم سے نڈھال ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز شہر قائد کے علاقے اورنگی ٹاون میں آئے روز وارداتوں کیخلاف علاقہ مکینوں کا احتجاج جاری تھاکہ پولیس نے شہریوں کو منتشر کرنے کیلئے شدید ہوائی فائرنگ کی۔گولیوں کی زد میں آکر اصغر امام شدید زخمی ہوگیا جسے انتہائی تشویشناک حالت میں ہسپتال منتقل کردیا گیا تھا جو ایک روز زندگی اور موت کی کشمکش میں مبتلا رہنے کے بعد آخر کارزخموں کی تاب نہ لا تے ہوئے دم توڑ گیا ۔ اصغر امام کی میت گھر پہنچتے ہی پورے علاقے کشیدگی پھیل گئی جبکہ اہل علاقہ ایک با ر پھر سراپا احتجاج بن گئے اور اسلام چوک کو ہر قسم کی ٹریفک کیلئے بند کر دیا۔ ورثا کا الزام عائد کرتے ہوئے کہنا تھا کہ پولیس نے اصغر امام کو براہ راست گولیوں کا نشانہ بنایا ہے۔

اپنی عوام کو بیت الخلا کی سہولت فراہم کر نے میں ناکام بھارت نے توانائی حاصل کرنے کے لیے چاند پر نظریں ڈالنا شروع کردیں

احتجاج کے دوران کے ایم کیو ایم پاکستان کے سربراہ فیصل سبزواری کا میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ میری گورنر سندھ اور وزیراعلی سندھ سے اپیل ہے کہ جتنے لوگوں کو گرفتار کرکے ان پر پولیس کی جانب سے ناجائز مقدمات عائد کئے گئے ہیں انہیں تمام مقدمات سے بری کرتے ہوئے جلد از جلد رہا کیا جائے اور واقعے میں ملوث تمام پولیس اہلکاروں کیخلاف کارروائی کی جائے ۔

مزید :

کراچی -