کیمبرج یونیورسٹی میں ’ خواتین پر بڑھتا تشدد‘ کے عنوان پر لیکچر، سلمان صوفی نے پاکستان کی نمائندگی کی

کیمبرج یونیورسٹی میں ’ خواتین پر بڑھتا تشدد‘ کے عنوان پر لیکچر، سلمان صوفی ...
کیمبرج یونیورسٹی میں ’ خواتین پر بڑھتا تشدد‘ کے عنوان پر لیکچر، سلمان صوفی نے پاکستان کی نمائندگی کی

  

کیمبرج (ڈیلی پاکستان آن لائن) برطانیہ کی کیمبرج یونیورسٹی کے مرکز برائے ترقی تعلیم نے پاکستان میں خواتین پر بڑھتے ہوئے تشدد پر لیکچر کا اہتمام کیاجس میں وزیر اعلیٰ پنجاب کے سٹریٹجک ریفارمز یونٹ کے ڈائریکٹر جنرل سلمان صوفی کو پاکستان کی نمائندگی کرنے اور طلبہ کو لیکچر دینے کیلئے دعوت دی گئی۔

سلمان صوفی نے لیکچر کے دوران پاکستان میں خواتین کے خلاف بڑھتے ہوئے تشدد اور پنجاب حکومت کی جانب سے ان پر قابو پانے کے طریقوں پر روشنی ڈالی ۔ انہوں نے اپنے لیکچر کے دوران تحفظ خواتین بل 2016 کے بارے میں بھی بات کی۔

سلمان صوفی نے طلبہ کو بتایا کہ پنجاب حکومت نے خواتین پر زبانی، معاشی، ذہنی یا سائبر تشدد کے خلاف پہلی بار بل پاس کیا ہے حالانکہ اس سے پہلے پنجاب میں ان اقسام کے تشدد کو تشدد نہیں سمجھا جاتا تھا۔ یہ بل منظور ہونے کے بعد اب ان تمام اقسام کے تشدد کو جرم تصور کیا جاتا ہے ، پنجاب حکومت کی جانب سے اس بل کے نفاذ کیلئے مختلف سنٹرز قائم کیے گئے ہیں جو خواتین کو ہر قسم کی قانونی مشاورت اور تحفظ فراہم کرتے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ تحفظ خواتین بل کے نفاذ کے بعد پنجاب جنوبی ایشیا کا پہلا خطہ بن گیا ہے جہاں خواتین کے تحفظ کا بل منظور کیا گیا ۔ سلمان صوفی نے اپنے لیکچر کے دوران اس بل کی تیاری ، منظوری اور اس کے نفاذ کیلئے اپنائے گئے طریقہ کار پر بھی روشنی ڈالی۔

مزید :

برطانیہ -