جام پور‘ عوام کو سبز باغ دکھانے والے سیاستدانوں کیخلاف شہری اتحاد تیار‘ ٹف ٹائم دینے کا فیصلہ

جام پور‘ عوام کو سبز باغ دکھانے والے سیاستدانوں کیخلاف شہری اتحاد تیار‘ ٹف ...

  

جام پور( نامہ نگار) بائیس سال گزرجانے کے باوجود راجن پور اور جام پور کو سوئی گیس فراہم نہ ہو سکی۔ 38کروڑ روپے کی (بقیہ نمبر60صفحہ12پر)

لاگت سے بچھائے جانے والے پائپ زنگ آلود۔ہر سال الیکشن کے موقع پر عوام کو سبز باغ دکھا کرکے ووٹ حاصل کرنے والوں کے خلاف آئندہ الیکشن میں نمٹنے کا فیصلہ کرلیا گیا۔ انیس سو اٹھاون میں سابق صدر فاروق احمد لغاری کی ہدایت پر نگراں وفاقی وزیر جاوید جبار خان نے 38کروڑ روپے کی لاگت سے پائپ بچھانے کے منصوبے کا افتتاح کیا۔ آج تک اس منصوبہ پر کوئی توجہ نہیں دی گئی۔ ہر الیکشن میں مقامی سیاسندانوں عوام کو سبز باغ دکھاکرکے ووٹ کی پرچی حاصل کر لیتے ہیں۔ جام پور اور راجن پور کے شمال اورجنوبی ڈھوڈک اور سوئی گیس سے سوئی گیس پورے ملک کو فراہم کی جارہی ہے لیکن افسوس کی چندکلومیڑ کے واقع پرراجن پور۔ جام پور شہر سوئی گیس کی سہولت سے محروم ہیں۔ دو ماہ قبل ممبر قومی اسمبلی سردار نصر اللہ دریشک نے راجن پور کو جبکہ ممبر قومی اسمبلی سردار ریاض خان مزاری نے کوٹ مٹھن اور روجھان کو سوئی گیس دینے کی نوید سنائی تھی۔ شہریوں نے سیاستدانوں کے رویہ سے تنگ آکرکے آہیندہ الیکشن محاسبہ کرنے کے لیے حکمت علی وضع کرتے ہوئے شہری اتحاد اور دیگر تنظیمیں بنانا شروع کر دیا ہے۔ جو مقامی سیاستدانوں کو محاسبہ کریں گی۔دوسری طرف بچھائے جانے والے پائپ اپنی مدت مکمل کر چکے ہیں۔پائپوں میں سوراخ پڑچکے ہیں۔سیاستدانوں نے رابطہ پر بتایا کہ وزیراعظم پاکستان کو اس مسلہ کی طرف توجہ دلا چکے ہیں بہت بڑا منصوبہ ہے جس کے لیے بھاری فنڈز درکار ہیں جوکہ وزیر اعظم ہی فنڈ ز فراہم کر سکتے ہیں۔

ٹف ٹائم

مزید :

ملتان صفحہ آخر -