خطرناک اور سیکیورٹی رسک ملزمان کی ویڈیولنک کے ذریعے سماعت کا فیصلہ

  خطرناک اور سیکیورٹی رسک ملزمان کی ویڈیولنک کے ذریعے سماعت کا فیصلہ

  

لاہور(کرائم رپورٹر) خطرناک قیدیوں کا ٹرائل جیلوں میں ویڈیولنک کے ذریعے ہوگا۔ لاہورسمیت پنجاب کی سنٹرل جیلوں میں اورانسداد دہشت گردی عدالتوں میں ویڈیو لنک سماعت کے لئے آلات نصب کر دئے گئے۔ لاہور سمیت پنجاب بھر کی جیلوں میں ہزاروں کی تعداد میں خطرناک قیدی اور دہشت گرد موجود ہیں۔ جن کو مختلف کیسز میں عدالتوں میں پیش کیا جاتا ہے، اس دوران پولیس کی اضافی نفری تعینات کرنے کے ساتھ ساتھ سکیورٹی رسک بھی ہوتا ہے، اس حوالے سے آئی جی جیل خانہ جات مرزا شاہد سلیم بیگ کا کہنا ہے کہ 8 سے زائدسنٹرل جیلوں میں ویڈیو لنک ٹرائل کے لیے کورٹ رومز جبکہ9 انسداد دہشت گردی عدالتوں میں ویڈیو لنک کے لیے آلات نصب کر دیئے گئے ہیں کروڑوں روپے کے سالانہ فنڈز جو قیدیوں کی سکیورٹی اور عدالتوں میں لانے لے جانے پر خرچ ہوتے ہیں،بچت ہوگی، عدالتوں کا وقت بھی بچے گا۔

مزید :

علاقائی -