علامہ اقبال نے مردہ ہجوم کو زندہ قوم میں تبدیل کیا :ذوالفقار چیمہ

علامہ اقبال نے مردہ ہجوم کو زندہ قوم میں تبدیل کیا :ذوالفقار چیمہ
علامہ اقبال نے مردہ ہجوم کو زندہ قوم میں تبدیل کیا :ذوالفقار چیمہ

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن )سابق انسپکٹر جنرل پولیس اور علامّہ اقبال کونسل کے چیئرمین ذوالفقار احمد چیمہ نے کہا کہ علامّہ اقبال نے ایک مردہ وپثرمردہ ہجوم کو ایک زندہ و تابندہ قوم میں تبدیل کردیا۔ انہوں نے غلامانہ سوچ پر کاری ضرب لگائی اور احساسِ کمتری کی زنجیریں کاٹ دی تھیں اور مسلمانوں کو خود اعتمادی اور خودداری کے جذبوں سے سرشار کیا تھا مگر ہم پھرغلامانہ سوچ کا شکار ہیں اور بدترین احساسِ کمتری میں مبتلاہو چکے ہیں۔وہ بحریہ یونیورسٹی میں طلبااور اساتذہ سے فکرِ اقبال کے موضوع پر خطاب کر رہے تھے۔انہوں نے کہا کہ اقبال کی دلی خواہش تھی کہ مسلمان نوجوان علم اور تحقیق کیساتھ رشتہ مستحکم کریں، ستاروں پر کمندیں ڈالیں اور سورج اور چاند کو مطیع اور محکوم بنائیں۔ مگرایسا نہ ہو، مسلمانوں نے کتاب پھینک دی تو حکیم لامّت نے نارضگی اور دلگرفتگی میں ان سے پوچھاکہ

کس طرح ہوا کند ترا نشترِ تحقیق ہوتے نہیں کیوں تجھ سے ستاروں کے جگر چاک

انہوں نے کہا کہ علامّہ اقبال مغرب کی علم دوستی کے قائل تھے مگر اس تہذیب کی مادہ پرستی، نسل پرستی اور سرمایہ داری کے خلاف تھے اور وہ سمجھتے تھے کہ مغربی تہذیب کی روح میں پاکیزگی نہیں ہے، اسکے سفید چہرے سے دھوکہ کھانے کی ضرورت نہیں ہے۔وہ خود اس تہذیب کی چکا چوند سے مرعوب نہیں ہوئے کیونکہ انہوں نے خود بتایا کہ

خیرہ نہ کر سکا مجھے جلو ہ ءدانشِ فرنگ سرمہ ہے میری آنکھ کا خاکِ مدینہ و نجف

ذوالفقار چیمہ نے نوجوانوں کومخاطب کرتے ہوئے کہا کہ اقبال چاہتے تھے کہ مسلم نوجوانوں کی خودی اور خودداری فولاد کی طرح مضبوط ہو اور ان میں شاہین کیطرح بلند نگاہی، غیرت،فقر اور بے نیازی کی صفات پیدا ہوں۔انہوں نے کہاکہ اقبال نے لیڈر شپ کیلئے درکار خوبیاں بتاتے ہوئے کہا تھاکہ صحیح لیڈر وہ ہے جسکے اہداف بلندہوں،جو خوش گفتار،باکرداراور جذبوں سے سرشار ہو۔اسمیں غیرت اور جراتِ رندانہ ہونی چائیے۔انہوں نے کہا کہ یہ کیسی آزادی اور خود مختاری ہے کہ نئی نسل کو پڑھائے جانے والے نصاب کا فیصلہ ہم نہیں کرسکتے، یہ بیرونِ ملک طے ہوتا ہے کہ پاکستان میں طلباوطالبات کو کیا پڑھایا جائیگا۔

انہوں نے کہا کہ فکرِ اقبال کا سب سے روشن پہلوانکی حضورنبی کریمﷺ سے محبت ہے۔انہوں نے اس محبت میں سرشارہوکر حضور ﷺ کی عقیدت میں بڑے غیر فانی شعر کہے ہیں۔

مزید : قومی