کومسٹس یونیورسٹی اسلام آباد کے انگلش کے امتحان میں طلباءسے فحش ترین سوال پوچھ لیا گیا،حکومت نے نوٹس لے لیا 

کومسٹس یونیورسٹی اسلام آباد کے انگلش کے امتحان میں طلباءسے فحش ترین سوال ...
کومسٹس یونیورسٹی اسلام آباد کے انگلش کے امتحان میں طلباءسے فحش ترین سوال پوچھ لیا گیا،حکومت نے نوٹس لے لیا 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )کومسٹس انسٹی ٹیوٹ آف انفارمیشن ٹیکنالوجی میں بیچولرز آف الیکٹرکل انجینئرنگ کے انگلش کے امتحان میں بہن بھائی کے آپس میں غیر اخلاقی تعلق کا منظر نامہ پیش کرتے ہوئے انتہائی فحش سوال پوچھ کر طلباءسمیت ہر کسی کی توبہ توبہ کروا دی ، تاہم وزارت سائنس اینڈ ٹیکنالوجی نے معاملے کا نوٹس لیتے ہوئے یونیورسٹی کو سخت ایکشن لینے کا حکم دیا  اور ایک ہفتے میں انکوائری رپورٹ طلب کر لی ہے ۔
تفصیلات کے مطابق وزارت سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کی جانب سے یونیورسٹی کو بھیجے گئے مراسلہ میں کہا گیاہے کہ وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی نے بیچولر آف الیکٹرک انجینئرنگ کے 4 اور 5 دسمبر 2022 کو ہونے والے کوئز میں پوچھے گئے انتہائی فحش سوال کا سخت نوٹس لیاہے۔ وزارت کا کہناتھا کہ امتحان میں پوچھا گیا سوال انتہائی قابل اعتراض اور پاکستان کے قوانین کے سخت مخالف ہے جس نے طلباءکے اہلخانہ میں بے چینی پھیلا دی ہے ۔کومسٹس یونیورسٹی اسلام آباد کی انتظامیہ کو ہدایت کی جاتی ہے کہ وہ متعلقہ حکام کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائیں اور ایک ہفتے میں انکوائری رپورٹ منسٹری میں جمع کروائیں ۔اس حرکت کے مرتکب ہونے والوں کو سز ا دی جائے ۔


یونیورسٹی کی جانب سے طلباءسے پوچھے جانے والے سوال کا سکرین شاٹ بھی سامنے آ گیاہے ، امتحان میں ایک پیرگراف کی صورت میں منظر پیش کیا گیا اور طلباءسے کہا گیا کہ اس حوالے سے اپنی سوچ پر مبنی تحریرلکھیں اور ساتھ نتیجہ بھی اخذکریں ، اس کا جواب 400 الفاظ پر مشتمل ہونا چاہیے ۔
انتہائی فحش سوال میں پوچھا گیا کہ بہن اور بھائی فرانس میں چھٹیاں منا رہے تھے کہ ایک رات وہ اکیلے تھے اور انہوں نے آپس میں تعلق قائم کرنے کا فیصلہ کیا ۔اس تعلق کو انہوں نے اپنی ساری زندگی راز رکھنے اور دوبارہ ایسانہ کرنے کا فیصلہ کیا ۔ آپ اس بارے میں کیا سوچتے ہیں اور کیا ان کیلئے ایسا کرنا ٹھیک تھا ؟مثالوں کے ساتھ اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے جواب دیں ۔

مزید :

تعلیم و صحت -