وادی نیلم میں برفباری نے معمولات زندگی کو مفلوج کر دیا ، بلتستان میں زلزلے کے باعث فائبر آپٹک کٹ گئی، رابطے منقطع 

وادی نیلم میں برفباری نے معمولات زندگی کو مفلوج کر دیا ، بلتستان میں زلزلے کے ...
وادی نیلم میں برفباری نے معمولات زندگی کو مفلوج کر دیا ، بلتستان میں زلزلے کے باعث فائبر آپٹک کٹ گئی، رابطے منقطع 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 مظفر آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )وادی نیلم میں تیسرے روز بھی مسلسل برفباری کا سلسلہ جاری ہے جس سے معمولات زندگی مفلوج ہو کر رہ گئے، بلتستان میں زلزلے کے باعث مواصلاتی نظام فائبر آپٹک کٹنے کے باعث درہم برہم ہو گیا ۔

تفصیلات کے مطابق شاہراہ نیلم دواریاں سے تاوبت تک ہر قسم کی ٹریفک کیلئے بند کر دی گئی ہے جس کے باعث عوام گھروں میں محصو ر ہو کر رہ گئے ہیں، محکمہ موسمیات کا کہناہے کہ برفباری کل شام تک جاری رہے گی ، مقامی انتظامیہ نے شہریوں کو تسلی دی ہے کہ جیسے ہی برفباری کا سلسلہ تھم جائے گا مواصلاتی نظام ٹھیک کر دیا جائے گا اور راستے بھی کھول دیئے جائیں گے ۔ راستے درخت گرنے کے باعث بند ہوئے ہیں ۔

دوسری جانب گزشتہ روز زلزلے کے باعث بلتستان ڈویژن کا بیرونی دنیا سے رابطہ منقطع ہو گیاہے ، زمینی اور فضائی رابطے کے بعد 14 گھنٹے سے ٹیلی مواصلاتی رابطہ بھی منقطع ہو چکاہے ، علاقے میں لینڈ لائن اورموبائل فون سروس بھی مکمل طور پر بند ہے، زلزلے کے باعث روندو کے علاقے میں لینڈ سلائیڈنگ کی وجہ سے فائبر آپٹک کٹ گئی تھی ۔

ترجمان وزیراعلیٰ گلگت بلتستان کا کہناہے کہ وہ موصلاتی رابطے کی بحالی کیلئے کام کر رہے ہیں تاہم زلزلے کے باعث جانی یا مالی نقصانات کی کوئی اطلاع موصول نہیں ہوئی ہے ۔ 

مزید :

ماحولیات -