پشاور، چیک پوسٹ کے قریب خودکش دھماکہ، لائن افسر صحافی سمیت 12افراد شہید، فضائی کارروائی میں 9دہشتگرد ہلاک

پشاور، چیک پوسٹ کے قریب خودکش دھماکہ، لائن افسر صحافی سمیت 12افراد شہید، ...

خیبر ایجنسی ،پشاور ( کرائمز رپورٹر،آن لائن) خیبر ایجنسی اور پشاور کے سرحدی علاقے جمرود روڈ پر کارخانو مارکیٹ کے قریب قائم خاصہ دار فورس کی چیک پوسٹ کے سامنے خودکش دھماکے سے خاصہ دار فورس کے لائن افسر نواب شاہ ،صحافی محبوب شاہ سمیت12 افراد جاں بحق جبکہ 25زخمی ہو گئے , زخمیوں کو حیات آباد میڈیکل کمپلیکس منتقل کر دیا گیا ہے جہاں 6زخمیوں کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے ۔تفصیلات کے مطابق منگل کے روز خیبرایجنسی اور پشاور کے سرحدی علاقے مصروف شاہراہ جمرود روڈ پر خو د کش بمبار نے کارخانومارکیٹ کے قریب خاصہ دار فورس کی چیک پوسٹ کے سامنے خود کو دھماکے سے اڑا دیا، حملہ آور موٹر سائکل پر سوار تھا اور اس کا ہدف فورسز کی چیک پوسٹ تھی ،جاں بحق ہونے والوں میں صحافی محبوب شاہ ، خاصہ دار فورس کے تین اہلکار ،میاں بیوی اور ان کا بیٹاجبکہ تین عام شہری بھی شامل ہیں ،واقع کی اطلاع ملتے ہی سکیورٹی فورسز، پشاور پولیس ،بم ڈسپوزل سکوارڈ اور امدادی ٹیموں کی بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی ،امدادی ٹیموں نے زخمیوں اور نعشوں کو جائے وقوعہ سے ریسکیو کرکے حیات آباد میڈیکل کمپلیکس منتقل کر دیا ، ہسپتال انتظامیہ کے مطابق 10نعشوں اور20زخمیوں کو ہسپتال منتقل کیا گیا جن میں 6زخمیوں کی حالت تشویشناک ہے جبکہ نعشوں کے چہرے بری طرح جھلس چکے ہیں جس کی وجہ سے شناخت میں دشواری کا سامنا ہے ،پولیس کے مطابق دھماکہ بہت شدید نوعیت کا تھا اس سے جائے وقوعہ کے قریب سے گزرنے والی تین گاڑیاں اور متعدد موٹرسائیکل آگ سے مکمل تباہ ہو چکے ہیں جبکہ متعدد دکانوں کو بھی نقصان پہنچا ہے ،سکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے کر سرچ آپریشن شروع کر دیا، بم ڈسپوزل سکوارڈ نے علاقے کو کلیئر قرار دے دیا ،دھماکے کے بعد پولیس نے علاقے کے تمام مصروف بازاروں اور حساس مقامات پر سکیورٹی پر معمور نفری میں اضافہ کر دیا گیا ،عینی شاہدین کے مطابق موٹرسائیکل سوار خودکش حملہ آور نے چیک پوسٹ کے سامنے خود کو دھماکہ خیز مواد ے اڑا یا ،حملہ آور کی عمر 25سے28کے درمیان تھی ۔سی سی پی اوپشاور مبارک زیب خان نے بتایا کہ دھماکا کارخانو کے قریب خیبر ایجنسی کے علاقے جمرود میں ہوا.زخمیوں کو حیات آباد میڈیکل کمپلیکس منتقل کیا گیا، جبکہ ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے،جبکہ دھماکے کے بعد پاک افغان شاہراہ بھی عارضی طورپربند کردی گئی ہے ،دوسری جانب صدر ، وزیر اعظم اور وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے دھماکے کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے جبکہ وزیر داخلہ نے آئی جی خیبر پختونخوا سے دھماکے کی رپورٹ طلب کر لی ہے جبکہ انتظامیہ کو متاثرہ افراد سے مکمل تعاون کی ہدایت کی ہے ۔دوسری طرف پاک فوج نے خیبر ایجنسی میں فضائی کارروائی کر کے9دہشت گردوں کو ہلاک کر دیا۔آئی ایس پی آر کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ پاک فوج نے خیبر ایجنسی میں فضائی کارروائی کی جس کے نتیجے میں9دہشت گرد ہلاک ہو ئے۔انہوں نے کہاکہ دہشت گردوں کے خلاف فضائی کارروائی پاک افغان سرحدی علاقے کے قریب کی گئی۔

مزید : صفحہ اول