یونیورسٹی حملہ ، دہشتگردوں نے عقب میں موجود گنے کے کھیتوں کا سہارالیا: رپورٹ

یونیورسٹی حملہ ، دہشتگردوں نے عقب میں موجود گنے کے کھیتوں کا سہارالیا: رپورٹ
یونیورسٹی حملہ ، دہشتگردوں نے عقب میں موجود گنے کے کھیتوں کا سہارالیا: رپورٹ

  


چارسدہ (مانیٹرنگ ڈیسک) چارسدہ کی باچاخان یونیورسٹی پر حملے میں 20سے زائد افراد شہید ہوگئے ہیں جبکہ نجی ٹی وی چینل نے انکشاف کیاہے کہ یونیورسٹی کے عقب میں موجودگنے کے کھیتوں اور دھند کا سہارالے کرحملہ آور یونیورسٹی تک پہنچ گئے ۔

92نیوز کے مطابق یونیورسٹی کی عقبی دیوار کیساتھ ملحقہ گنے کے کھیت ہیں جہاں پاﺅں کے نشانات واضح موجود ہیں جبکہ دیوار کے ساتھ سے ربڑکی چپل بھی ملی ہیں جو ممکنہ طورپر حملہ آوروں نے پہن رکھی تھیں ۔ رپورٹ کے مطابق حملہ آوروں نے دیوارمیں سے اینٹیں نکال کر اوپر چڑھنے کا بندوبست کیا جس کے بعد دیوارکے اوپر لگی آہنی باڑ کو کاٹ کر دیوار پھلانگ گئے ۔

اسی دیوار کے بعد رہائشی کالونی ہے جسے عبور کرنے کے بعد آگے ہاسٹل ہیں اور اس سے مزید آگے دیگربلاکس موجود ہیں ۔ رپورٹ کے مطابق دھند کی وجہ سے دہشتگردباآسانی گنے کے کھیتوں سے ہوتے ہوئے یونیورسٹی تک پہنچنے میں کامیاب ہوگئے ۔

مزید : چارسدہ