” اپنی فیملی کے ساتھ سفر کر رہا ہوں ، میں دہشتگرد نہیں ہوں اس لیے ۔۔۔ “ سانحہ ساہیوال کے بعد اپنی گاڑیوں پر کون سی تحریر لکھوانے کی مہم چل پڑی ؟ جان کر آپ کی آنکھوں سے آنسو نہ رکیں

” اپنی فیملی کے ساتھ سفر کر رہا ہوں ، میں دہشتگرد نہیں ہوں اس لیے ۔۔۔ “ سانحہ ...
” اپنی فیملی کے ساتھ سفر کر رہا ہوں ، میں دہشتگرد نہیں ہوں اس لیے ۔۔۔ “ سانحہ ساہیوال کے بعد اپنی گاڑیوں پر کون سی تحریر لکھوانے کی مہم چل پڑی ؟ جان کر آپ کی آنکھوں سے آنسو نہ رکیں

  


لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) سانحہ ساہیوال میں سی ٹی ڈی کے ہاتھوں ایک فیملی کی شہادت کے بعد سوشل میڈیا پر ایک مہم چل پڑی ہے جس میں لوگ کہہ رہے ہیں کہ انہیں اپنی گاڑیوں پر ایسی تحریر لکھوالینی چاہیے جس سے سی ٹی ڈی اور ایلیٹ والے انہیں اپنی گولیوں کا نشانہ نہ بنائیں۔

ٹوئٹر اور فیس بک پر کئی صارفین کی جانب سے ایک گاڑی کی تصویر شیئر کی جارہی ہے جس کے پیچھے انگریزی کی ایک عبارت لکھی گئی ہے جس کا اردو ترجمہ یوں ہے” پیاری سی ٹی ڈی / ایلیٹ فورس، میں اپنی فیملی کے ساتھ سفر کر رہا ہوں اور میں دہشتگرد نہیں ہوں اس لیے مجھے مت مارنا“۔

سفینہ شیخ نامی خاتون ٹوئٹر صارف نے انڈین گانے سننے والے نوجوانوں کو نصیحت کی کہ وہ اپنی گاڑیوں کے پیچھے یہ تحریر لکھوائیں” ڈیئر سی ٹی ڈی ، میں پاکستانی ہوں اور مسلمان بھی ہوں، بس انڈین گانے دل پشوری اور انجواے کرنے کے لیے سن رہا ہوں مجھے دہشتگرد سمجھ کر گولی نہ ماری جائے“۔

مزید : قومی /علاقائی /پنجاب /لاہور