ٹی وی پر مناظر ہ کرلیں، ثابت کردوں گا کہ این آر او مانگ رہے ہیں :وفاقی وزیر شیخ رشید کا شہباز شریف کو چیلنج

ٹی وی پر مناظر ہ کرلیں، ثابت کردوں گا کہ این آر او مانگ رہے ہیں :وفاقی وزیر شیخ ...
ٹی وی پر مناظر ہ کرلیں، ثابت کردوں گا کہ این آر او مانگ رہے ہیں :وفاقی وزیر شیخ رشید کا شہباز شریف کو چیلنج

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے کہاہے کہ عمران خان امریکہ نہیں جارہے ، ٹرمپ پاکستان آرہے ہیں، شہبازشریف این آر اومانگ رہے ہیں ، مجھ سے ٹی وی پرمناظرہ کرلیں ثابت کروں گا،نواز شریف اس وقت شہباز شریف کے کہے میں آگئے ہیں، آصف زرداری نے بلاول کا مستقبل برباد کردیا ہے ، شہباز شریف نے مجھے پی اے سی میں بلایا تو خوشی خوشی جاﺅں گا ، میں کوئی فیصل واڈا نہیں ہوں ، ساری دنیا میں کوئی نہیں جو میری طرح 8بار وزیربنا ہو۔

سماءنیوز کے پروگرام”نیوز بیٹ“ میں گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید احمد نے کہا کہ ادارے عمران خان کے ساتھ کھڑے ہیں ، لوگ لٹیروں اورڈاکوﺅں کی شکل نہیں دیکھناچاہتے ، میں خوفزدہ نہیں ہوں ،ڈنکے کی چوٹ پر غریبوں کا کیس لڑ رہاہوں۔ انہوںنے کہا کہ میں قوم کو یقین دلاتا ہوں کہ میں ان کے مسائل روز عمران خان کے سامنے پیش کررہا ہوں اورمیں قوم کا مجرم ہوں گا اگر میں یہ باتیں عمران خان تک نہ پہنچاﺅں۔ انہوں نے کہا کہ 2000میں ملک کے حالات ٹھیک ہوجائیں گے ، خزانے کیلئے اسد عمر سے بہتر کوئی آپشن نہیں ہے،شماریات کا جعلی ڈیٹا دیکر خزانے کو برباد کردیاگیا، خزانے کو اپنے پیرو ں پر کھڑاکرنا ہے ، یہ دو تین ماہ خزانے کیلئے مشکل ہیں، ریلوے میں ایک سال میں دس ارب کااضافہ کروں گا۔انہوں نے کہا کہ ملک کی معاشی مشکلا ت کے ذمہ دار آصف زرداری اور نواز شریف ہیں، اربوں روپیہ لوٹ کر بیرون ملک بھیجا گیا ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ زرداری اور نوازشریف کی وجہ سے غریب مر گیاہے ، اللہ کرے کہ اپوزیشن اکھٹی ہوجائے اور پیپلز پارٹی کا جوتھوڑا بہت کچرا رہ گیاہے وہ بھی صاف ہوجائیگا ۔انہوں نے کہا کہ میں حکومت کا حصہ ہوں لیکن میں میٹھا میٹھا ہپ ہپ نہیں کروں گا ، میں تھو کوتھو ہی کہوں گا ، میں شہبازشریف کے چیئرمین پی اے سی بننے کے معاملے پر سپریم کورٹ جاﺅں گا، چاہے میرا کیس مسترد ہی ہوجائے ، میں نے عمران خان سے نہیں پوچھا کہ شہبازشریف کو چیئر مین پی اے سی کیوں لگایا گیا ؟ میں اپنے کردار کا ذمہ دار ہوں ، اللہ مجھے نظر بد سے بچائے ، اس وقت ساری دنیا میں کوئی نہیں ہے جو 8بار وزیر بنا ہو، میں پبلک اکاﺅنٹس کمیٹی میں جارہا ہوں جس نے روکناہے روک لے ، رانا ثنا ءاللہ کے پبلک اکاﺅنٹس کمیٹی میں آنے سے بدبوزیادہ ہوجائےگی ، وہ بڑے شوق سے پی اے سی میں آئے ۔انہوں نے کہا کہ میں قوم کو زبان دیتا ہوں کہ میں جھوٹ نہیں بولوں گا ،این آر او کے حوالے سے شہبازشریف میرے ساتھ ٹاک شو میں مناظرہ کرلے ، میں ثابت کردوں گا کہ شہبازشریف این آر او مانگ رہے ہیں، میری سیاست خراب ہوجائیگی لیکن میں شہبازشریف کی سیاست کابھی مکو ٹھپ دوں گا ۔ انہوں نے کہا کہ اس حوالے سے چودھری نثار نے مجھے سے گلہ کیاہے جس پر میں نے چودھری نثار سے کہاہے کہ اب میں یہ بات نہیں کروں گا کہ شہباز شریف این آر او مانگ رہاہے ۔انہوں نے کہا کہ سمجھداروں کیلئے اشارہ کررہاہوں جو میرا پروگرام دیکھتے ہیں ،ان کو پتہ ہے کہ شیخ رشید کہاں سے بولتاہے ، جب میں بتا رہا تھا کہ بے نظیر کے ساتھ این آر او ہو رہا ہے تو کوئی مانتا تھا یہ بات !انہوں نے کہا کہ این آر او کے معاملے میں میں نے عمران خان سے بات کی ہے اوران کے بغیر این آر او نہیں ہوگا ، سمجھدار کیلئے اشارہ کافی ہے ، بیوقوفوں سے سارا ملک بھرا پڑا ہے ۔

شیخ رشیدکا کہناتھا کہ میں وہ سیاستدان ہوں جو پردے کے پیچھے دیکھتاہے ، اس وقت ”مجھے کیوں نکالا “ کی تحریک کہاں گئی ،نواز شریف کی خاموشی کا مطلب یہ ہے کہ وہ شہبازشریف کے کہے میں آگئے ہیں لیکن مجھے راستہ نکلتا دکھائی نہیں دیتا ۔ انہوں نے کہا کہ میں نے اتنی بڑی خبردی ہے کہ عمران خان امریکہ نہیں جارہے بلکہ ٹرمپ پاکستان آرہاہے اور لوگ میرا مذاق اڑا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میرے لئے اعزاز کی بات ہے کہ امریکہ نے مجھے دوبار جہاز سے اتارا اوراب میں چاہتا ہوںکہ وہ لال حویلی میں آکر مجھ کو ویزا دیں اور میں کہوں کہ نہیں چاہئے،ان کاکہنا تھا کہ شریف خاندان اس وقت ٹکے ٹوکری ہوچکاہے ، ان کی کیا عزت ہے ؟ لوٹی ہوئی دولت ان کو رات کوسونے نہیں دیتی ۔ انہوں نے کہا کہ آصف زرداری نے بلاول کا مستقبل تباہ کردیا ہے، چانڈیو، اعتزاز احسن اور کائرہ جیسے اچھے لوگ آصف زرداری کے نیچے نہیں جچتے ، آصف زرداری کا کیس نواز شریف سے ایک ہزار گنا زیادہ سنجیدہ ہے ۔انہوں نے کہا کہ اگر پیپلز پارٹی اور ن لیگ کرپشن کرے تو ان کو سات سال قید اور اگر ہم کریں تو ہمیں اس سے ڈبل سزا ہونی چاہئے ۔

مزید :

قومی -ڈیلی بائیٹس -اہم خبریں -