مہنگائی میں کمی، شرح نمو سود سنگل ڈیجیٹ کیا جائے، ٹیکس ماہرین

مہنگائی میں کمی، شرح نمو سود سنگل ڈیجیٹ کیا جائے، ٹیکس ماہرین

  



لاہور(این این آئی)حکو مت مقامی سطح پر نئی سرمایہ کاری اور مہنگائی میں کمی کیلئے پالیسی ریٹ کو سنگل ڈیجٹ میں لائے،ٹیکس دہند گان کو شک کی نگاہ سے دیکھنے کی پالیسی ترک کر کے ان کی حوصلہ افزائی کی جائے تاکہ دوسرے لوگ بھی بلا خوف ٹیکس نیٹ میں شامل ہوں،ٹیکس قوانین اور پا لیسیوں کو ٹیکس با رز اور چیمبرز کی معا ونت کے بغیر کا میا ب نہیں بنا یا جا سکتا،ٹیکس آمدن میں اضافے کیلئے حکومت کو غیر مشروط طو رپر تجاویزدینے کیلئے تیار ہیں۔ان خیالات کا اظہار لا ہور ٹیکس با ر کے صدارتی ا مید وار علی احسن رانا،سید فہیم ہا شمی،احسان سلیم،قد یر آ صف سمیت دیگر ٹیکس ما ہر ین ٹیکس نے ”ٹیکسیشن کا نظام،معیشت اورحکومتیپالیسیاں“کے مو ضو ع پرمنعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس مو قع لا ہور ٹیکس با ر کے سر پر ست اعلی ضیا حید ررضوی،سا بق صدر پا کستا ن ٹیکس بار ذوالفقار خا ن،سا بق صدر لا ہور ٹیکس با ر عا ئشہ قا ضی سمیت تا جر وں اور ٹیکس با رز کے ممبران کی کثیر تعداد بھی موجود تھی۔مقررین نے کہا کہ حکومت کے بعض غلط فیصلوں کی وجہ سے مقامی سطح پر سرمایہ کاری منجمد ہو گئی ہے جس کی وجہ سے کاروبار نہ ہونے سے حکومت کی ٹیکس آمدن میں بھی کمی ہو رہی ہے، مینو فیکچرنگ گروتھ کیلئے پالیسی ریٹ کو سنگل ڈیٹ میں لایا جائے کیونکہ موجودہ پالیسی ریٹ پر کوئی کاروبار نہیں کیا جا سکتا۔ اس اقدام سے مہنگائی کی شرح بھی نیچے آئے گی جس سے عوام کا حکومت پر اعتماد بحال ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ پالیسیوں کے ساتھ ٹیکس اہدا ف کو پو را کر ناجو ئے شیر لا نے سے کم نہیں،تا جر برا دری ٹیکس با ر ز کے نما ئندوں پر اعتما د کر تے ہیں اگر حکومت معاونت لینا چاہے تو ٹیکس با ر ز کے نما ئند ے ٹیکس کلیکشن میں اضافے اور ٹیکس اہدا ف کو پو را کرنے میں حکومت کا بھرپور ساتھ دینے کیلئے تیار ہیں بشر طیکہ حکومت چیمبر ز اوراسٹیک ہو لڈر کو بھی آ ن بو رڈ لے۔

مزید : کامرس