خیبر پختونخوا میں 100آبی منصوبوں کو شمسی توانائی پر منتقل کرنے کی منظوری

      خیبر پختونخوا میں 100آبی منصوبوں کو شمسی توانائی پر منتقل کرنے کی منظوری

  



کوہاٹ(این این آئی) حکومت خیبرپختونخوا نے سی پیک گرانٹ کے تحت صوبہ بھر میں فراہمی آب کے موجودہ 100 منصوبوں کوبجلی سے شمسی توانائی پر منتقل کرنے کی منظوری دے دی جس پر 69 کروڑ54 لاکھ روپے کی لاگت آئے گی۔ اس منصوبہ کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے لئے چائنا پاکستان اکنامک کوریڈور (سی پیک) گرانٹ کے تحت رقم فراہم کی جائے گی۔ باخبر سرکاری ذرائع نے بتایا کہ اصل منصوبہ کے تحت 800 واٹرسپلائی سکیموں کو 2 ارب 38 کروڑ84 لاکھ روپے کی لاگت سے شمسی توانائی پرمنتقل کرنے کا تخمینہ لگایا گیا تھا جسے گزشتہ دنوں صوبائی ترقیاتی ورکنگ پارٹی کے اجلاس میں منظوری کے لئے پیش کیا گیا تھا تاہم اجلاس کے شرکاء نے 800 کی بجائے ابتدائی طورپرفراہمی آب کے 100 منصوبوں کو شمسی توانائی پر چلنے کی منظوری دی جبکہ باقی 700 منصوبوں کو تفصیلی سروے اور فزیبیلٹی رپورٹ آنے کے بعد منظوری کے لئے پیش کرنے کا فیصلہ کیا۔ذرائع کے مطابق اس منصوبے کے تحت 100 منصوبوں کے لئے حفاظتی دیوار/باؤنڈری وال اور فاؤنڈیشن وغیرہ کی تعمیر پر 21 کروڑ35 لاکھ 22ہزار روپے‘ شمسی نظام کی تنصیب بشمول ٹرانسپورٹیشن وغیرہ پر3کروڑ56 لاکھ25 ہزار روپے‘ کنسلٹنسی سروسز پر 27 کروڑ57 لاکھ 32 ہزارروپے‘ منصوبے کے لئے پراجیکٹ منیجر یونٹ کے قیام کے لئے 11 کروڑ17 لاکھ32 ہزار روپے‘مشینری کی خریداری پر 92 لاکھ روپے جبکہ مشینری کی کسٹم کلیئرنس پر5 کروڑ روپے کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔ذرائع نے مزید بتایا کہ منصوبہ کے تحت تمام مشینری چینی حکومت فراہم کرکے کراچی بندرگاہ پہنچائے گی جبکہ حکومت پاکستان کسٹم کلیئرنس‘ ڈیوٹی سے مستثنیٰ کرنے‘ مشیرنی کی رجسٹریشن اور صوبہ خیبرپختونخوا تک پہنچانے کی ذمہ دار ہوگی۔

منتقل کرنے کی منظوری

مزید : علاقائی