جانوروں کی بہتر نشوونما پر مویشی پال کو نقد انعام دینے کی سکیم متعارف

جانوروں کی بہتر نشوونما پر مویشی پال کو نقد انعام دینے کی سکیم متعارف

  



ڈیرہ غازی خان(ڈسٹرکٹ بیورورپورٹ‘ سٹی رپورٹر)وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان احمد خان بزدار کی ہدایت پر حکومت پنجاب صوبہ میں مویشی پال کی معاشی خوشحالی کیلئے اقدامات کرہی ہے۔ اپنے ہی مویشی کی بہتر نشوونما پر مویشی پال کو نقد انعامات دینے کی سکیم متعارف کرادی گئی (بقیہ نمبر16صفحہ12پر)

ہے''کٹا بچاو'' سکیم کے تحت فی مویشی 6500 روپے اور ''کٹا فربہ'' سکیم پر فی مویشی 4000 روپے دئیے جائیں گے۔مویشی پال کا محکمہ لائیو سٹاک کے ساتھ رجسٹرڈ ہونا ضروری ہے۔سکیم سے متعلق آگاہی کیلئے صوبائی وزیر لائیو سٹاک سردار حسنین بہادر دریشک کی زیر صدارت راجنپور میں تربیتی سیشن منعقد ہوا۔صوبائی وزیر لائیو سٹاک پنجاب سردار حسنین بہادر دریشک نے کہا کہ شعبہ لائیو سٹاک کو بہتر کرکے پنجاب بالخصوص ملک کو ترقی کی راہ پر گامزن کیا جاسکتا ہے۔اس موقع پر صوبائی وزیر نے مویشی پال سے ملاقات کی۔مسائل کے ساتھ ان سے تجاویز طلب کیں۔ میزبان ڈائریکٹر لائیو سٹاک ڈیرہ غازی خان ڈویژن ڈاکٹر توصیف طاہر نے کہا کہ کٹا بچاو پروگرام کے تحت ڈیرہ غازی خان ڈویژن میں مویشی پال کے 507 گروپ رجسٹرڈ کئے گئے ہیں اور ہر گروپ میں دس کٹے شامل کئے گئے ہیں۔اس سکیم کے تحت 4 ماہ میں مویشی کا 36 کلوگرام وزن بڑھانا ضروری ہے۔کٹا فربہ سکیم کے تحت ڈویژن میں 154 گروپ رجسٹرڈ کئے گئے ہیں اور ایک گروپ میں 25 کٹے شامل کئے جاسکتے ہیں۔ 3 ماہ میں مویشی کا 63 کلوگرام تک وزن بڑھانا ضروری ہے۔تربیتی سیشن میں زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کے پروفیسر شوکت بھٹی،ایڈیشنل ڈائریکٹر فیصل آباد ڈاکٹر حیدر علی خان، ریسرچ آفیسر بہادر نگر اوکاڑہ ڈاکٹر برھان،ایڈیشنل ڈائریکٹر راجنپور ڈاکٹر حسن مجتبی،ایڈیشنل ڈائریکٹر ڈیرہ غازی خان ڈاکٹر غلام نظام الدین اور دیگر نے مویشیوں کی بہتر دیکھ بھال،بیماریوں سے بچاؤ کی تربیتی لیکچرز دئیے۔مثالی کاشتکار اللہ بخش گوپانگ،آصف مسعود قریشی اور مویشیوں کی کثیر تعدادموجود تھی۔

متعارف

مزید : ملتان صفحہ آخر