نوشہرہ میں مدرسے جاتی ہوئی7سالہ بچی کو جنسی درندوں نے زیادتی کا نشانہ بنا کر قتل کردیا

نوشہرہ میں مدرسے جاتی ہوئی7سالہ بچی کو جنسی درندوں نے زیادتی کا نشانہ بنا کر ...
نوشہرہ میں مدرسے جاتی ہوئی7سالہ بچی کو جنسی درندوں نے زیادتی کا نشانہ بنا کر قتل کردیا

  



نوشہرہ (ڈیلی پاکستان آن لائن ) نوشہرہ کے علاقے زیارت کاکا صاحب میں سات سالہ بچی عوض نور کو مدرسہ جاتے ہوئے اغوا کرلیا مبینہ طور پر زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد ملزمان نے معصوم بچی کو گلہ دبا کر پانی کی ٹینکی میں غوطے دے دے کر قتل کر دیا۔ ملزمان بچی کے چچا اور دیگر اہل علاقہ کو دیکھ کر بچی کو پانی کی ٹینکی میں پھینک کر فرارہوگئے بچی کی لاش ٹینکی سے نکالی گئی اور پھر اہل علاقہ نے ملزمان کا پیچھا کرکے رات گئے دونوں ملزمان کو گرفتار کیا گیا۔ جرگہ نے خود دونوں ملزمان کو قتل کرنے کے فیصلہ کا اعلان کر دیا۔ فجر کے وقت جرگہ کے فیصلے پر دونوں ملزمان کو نوشہرہ کلاں پولیس کے حوالے کردیا گیا بچی کا پورسٹ مارٹم خیبر میڈیکل کالج میں کرایا گیا بچی اور ملزمان کے نمونے ڈ ی این اے ٹیسٹ کے لیے فرانزک لیبارٹری روانہ کردئیے گئے۔سیاسی عمائدین کا کاصاحب میں سوگوار خاندان کے ساتھ اظہار تعزیت کا سلسلہ جاری ہے۔

اس حوالے سے ٹوئٹر پر ٹرینڈ چل رہا ہے اور لوگ حکومت سے مطالبہ کر رہے ہیں کہ اس بچی کے قاتلوں کو سر عام پھانسی دی جائے ۔

مزید : علاقائی /خیبرپختون خواہ /نوشہرہ