کرنا ٹک، ہندو انتہا پسندوں کا 2مسلمان نوجوانوں پر تشدد، ایک شہید، دوسرا زخمی

کرنا ٹک، ہندو انتہا پسندوں کا 2مسلمان نوجوانوں پر تشدد، ایک شہید، دوسرا زخمی

  

      بنگلور(آئی این پی) بھارتی ریاست کرناٹک کے ضلع گدگ میں ہندو انتہا پسند تنظیم آر ایس ایس کے غنڈوں نے دو مسلمان نوجوانوں انیس سالہ سمیر اور اکیس سالہ شمشیر کو وحشیانہ تشدد کا نشانہ بناتے ہوئے شدید زخمی کر دیا۔غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق سمیر منگل کی صبح ہبلی کے کرناٹک انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسزہسپتال میں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسا جبکہ شمشیر کی حالت نازک ہے۔ایک مقامی رہائشی حسین کا کہنا ہے کہ آر ایس ایس کے کارکنوں نے سمیر کے سینے پر چاقو سے وار کیا۔ اور شمشیر پر بھی مہلک ہتھیار سے حملہ کیا گیا۔حسین نے یہ بھی کہا کہ دونوں پر یہ مہلک حملہ پیر کے روز ناراگنڈ میں بجرنگ دل کی طرف سے منعقدہ ایک اجتماع کے فوراً بعد کیا گیا جہاں مسلمانوں کیخلاف نعرے لگائے گئے۔ اجتماع کی ویڈیوز میں دیکھا جاسکتاہے کہ بجرنگ دل رہنما سنجو نلواڑے پولیس افسروں کی موجودگی میں مسلمانوں کیخلاف نسل کشی پر مبنی تقریر کر رہے ہیں۔

نوجوان شہید

مزید :

صفحہ آخر -