عصری، تہذیبی مسائل کے حل  کے لئے خواجہ اجمیرؒ کی تعلیمات سے استفادہ ضروری، بلیغ الرحمن

 عصری، تہذیبی مسائل کے حل  کے لئے خواجہ اجمیرؒ کی تعلیمات سے استفادہ ضروری، ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(فلم رپورٹر)خواجہ معین الدین چشتی اجمیری ؒکے سالانہ عرس کی مناسبت سے داتاؒ دربار میں تین روزہ تقریبات اختتام پذیر،داتا دربارمیں خواجہ اجمیر”عالمی تصوّف کانفرنس“کے اختتامی سیشن میں گورنر پنجاب نے بطور مہمان خصوصی شرکت۔ گورنر پنجاب بلیغ الرحمن کا استقبال وزیر اوقاف سیّد اظفر علی ناصراور سیکرٹری اوقاف ڈاکٹر طاہر رضا بخاری نے کیا۔ خواجہ اجمیر ؒ نے خطے میں شرفِ آدمیت اور تکریم انسانیت کولازم کیا۔ گورنر پنجاب میاں بلیغ الرحمن نے کہا کہ عصری، تہذیبی مسائل کے حل کے لئے خواجہ اجمیرؒ کی تعلیمات سے استفادہ ضروری ہے۔  بلیغ الرحمن نے کہا کہ معین الدین چشتیؒ کے افکار پر عمل پیرا ہو کر فلاحی معاشرے کی تشکیل ممکن ہے۔گورنر پنجاب کانفرنس کا انعقاد خوش آئند ہے۔ محکمہ اوقاف و مذہبی امور پنجاب دینی، علمی اور روحانی اقدار کا امین اور صوفیاء  کی صحیح تعلیمات کا علمبردار ہے۔ فلاحی معاشرے کی تشکیل کے لئے صوفیاء_  کی تعلیمات پر عمل پیرا ہونا ضروری ہے۔وزیر اوقاف  بیرسٹر سیّد اظفر علی ناصر نے کہا کہبر صغیر میں اسلام کی ترویج کے حوالے سے خواجہ اجمیرؒکا نمایاں مقام ہے۔ صوفیاء کے آستانے آسودی اور روحانی تسکین کا مرکز ہیں۔ سیکرٹری اوقافڈاکٹر طاہر رضا بخاری  نے کہا کہ خواجہ معین الدین چشتیؒنے دینی اور علمی روایات کو فروغ بخشا۔دیگر مقررین کا کہنا تھا کہ معین الدچشتی ؒ نے رنگ ونسل اور علاقائی وقبائلی تقسیم سے بالا ہوکر رواداری،اخوت اور انسان دوستی جیسے جذبوں کو فراواں کیا۔ساتویں انٹرنیشنل کانفرنس میں بین الاقوامی مندوبین، انٹر نیشنل سکالرز، مشائخ، سجاد گان اور سادات کرام کی شرکت۔

 بلیغ الرحمن

مزید :

صفحہ آخر -