وفاقی حکمرانوں کو مسائل کے حل سے سروکار نہیں ‘وہ صرف جیبیں بھرنے میں مصروف ہیں:شہباز شریف

وفاقی حکمرانوں کو مسائل کے حل سے سروکار نہیں ‘وہ صرف جیبیں بھرنے میں مصروف ...

لاہور(ثناءنیوز) وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے کہا ہے کہ علی بابا چالیس چوروں کی کالی کرتوتوں کی وجہ سے ملک کو توانائی کے شدید بحران کا سامنا ہے۔ پاکستان میں بجلی پیدا کرنے کی پوری گنجائش موجود ہے لیکن حکمرانوں کو عوام کے مسائل سے کوئی سروکار نہیں، ان کا مطمع نظرلوٹ مار اور غریب قوم کی محنت کی کمائی سے اپنی جیبیں بھرنا ہے۔ توانائی کے بحران پر قابو پانے کے لئے درست پالیسی اپنانے کی بجائے بدعنوان حکمرانوں نے کرائے کے بجلی گھروں کے نام پر غریب قوم کے اربوں روپے لوٹے۔ پنجاب کے ساتھ بجلی کی لوڈشیڈنگ میں غیر منصفانہ سلوک کے ذریعے صوبے کی معیشت کو تباہ کیاگیا پنجاب کے عوام کے ساتھ ظلم و زیادتہ کے خلاف اور عوام کے دکھ درد بانٹنے کے لئے ہم نے صدائے احتجاج بلند کرتے رہیں گے۔ وزیراعلیٰ نے شاہدرہ میں 30 کروڑ روپے کی لاگت سے مختلف ترقیاتی سکیموں کا اعلان کیا۔ وہ گزشتہ روز ٹینٹ آفس میں شاہدرہ کے عمائدین کے ایک وفد سے گفتگو کررہے تھے۔ ممبر قومی اسمبلی ملک ریاض، ممبر صوبائی اسمبلی رانا محمد اقبال خان، ڈی سی او لاہور، ایم ڈی واسا، ڈی جی پی ایچ اے اور دیگر متعلقہ افسران بھی اس موقع پر موجود تھے وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف نے شاہدرہ کے عمائدین سے خطاب کرتے ہوئے اعلان کیا کہ علاقے میں 5 واٹر فلٹریشن پلانٹس فوری طور پر لگائے جائیں گے اور یہاں عوام کو تفریحی سہولتوں کی فراہمی کے لئے پارک بنایا جائے گا۔ دریں اثناءوزیراعلیٰ محمد شہبازشریف نے پنجاب گورننس فورم سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ اسلام آباد میں براجمان نااہل حکمرانوں کی گزشتہ چار سالوں سے جاری لوٹ مار اور بری طرز حکمرانی سے نہ صرف پوری قوم مشکلات ومسائل میں گھری ہوئی ہے بلکہ جمہوری نظام اور جمہوری اداروں کو بھی نقصان پہنچا ہے۔ ملک کو درپیش تمام مسائل کا حل آزادانہ اور شفاف انتخابات کے فوری انعقاد سے ہی ممکن ہے۔ ملک میں فرسودہ نظام کے خاتمے اور ترقی وخوشحالی کی منزل پانے کے لئے اجتماعی بصیرت اور کاوشوں کو بروئے کار لانے کی ضرورت ہے۔ پاکستان میں بہت ٹینٹ موجود ہے ملک ہر طرح کے وسائل کی دولت سے مالا مال ہے لیکن اس کے باوجود ہم دنیا بھر میں کشکول گدائی اٹھائے مارے مارے پھر رہے ہیں وقت آگیا ہے کہ اغیار کی امداد کو خیر باد کہہ کراپنے وسائل پر انحصار کرنے کی پالیسی اپنائی جائے۔ پنجاب حکومت نے صوبے کے سرکاری اداروں میں انفارمیشن ٹیکنالوجی کے استعمال کو فروغ دے کر ان اداروں کو استعداد کار میں اضافہ کیا ہے کرپشن کے خاتمے کے لئے ٹھوس اقدامات کئے ہیں اور سادگی کے کلچر کو فروغ دیا ہے۔ انڈومنٹ فنڈز کے حوالے سے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف نے کہا ہے کہ پنجاب ایجوکیشنل انڈومنٹ فنڈ کے قیام سے وسائل کی کمی کا شکار ہونہار طالبعلموں کے لئے اپنی تعلیمی سرگرمیوں کو پورا کرنے کا خواب اب ادھورا نہیں رہے گا۔ انڈومنٹ فنڈ کے قیام سے 30 ہزار سے زائد ہونہار طلباءوطالبات میرٹ کی بنیاد پر وظائف حاصل کررہے ہیں جبکہ آئندہ سال اس کا ہدف 50 سے 60 ہزار وظائف تک کردیاجائے گا۔ وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف نے اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب ایجوکیشنل انڈومنٹ فنڈ کا قیام پنجاب حکومت کا انقلابی اقدام ہے جس کے ذریعے نوجوانوں کی تعلیمی ضروریات میں معاونت کی جارہی ہے۔ وزیراعلیٰ پنجاب سے مسلم یلگ ن کے سیئر رہنما عبدالقیوم نے ملاقات کی ، ملاقات میں سیاسی صورتحال بالخصوص ضلع چکوال میں مسلم لیگ ن کی تنظیمی سرگرمیوں اور ترقیاتی منصوبوں پر تبادلہ خیال کیاگیا۔ اس موقع پر لیفٹیننٹ جنرل(ر) عبدالقیوم نے علاقہ میں ترقیاتی منصوبوں کو شفاف انداز میں پایہ تکمیل تک پہنچانے پر پنجاب حکومت کی کاوشوں کو خراج تحسین پیش کیا وزیراعلیٰ نے ہدایت کی کہ عوام کی سہولت کے لئے کلر کلہار اور چواءسیدن شاہ روڈ کی مرمت کا کام فوری مکمل کیاجائے اور جب تک نئی سڑک تعمیر نہیں ہوتی پرائیویٹ ٹرانسپورٹ سے ٹول ٹیکس وصول نہ کیاجائے۔

مزید : صفحہ اول