مون سون کے دوران چڑیا گھر میں ناقص انتظامات‘پنجروں میں پانی‘جانور بیمار

مون سون کے دوران چڑیا گھر میں ناقص انتظامات‘پنجروں میں پانی‘جانور بیمار

لاہور(لیڈی رپورٹر) صوبائی دارلحکومت میں واقع واحد چڑیا گھر کے عملے کی غفلت اور لاپراواہی کے باعث چڑیا گھر کے متعدد جانور بیمار پڑ گئے۔ مون سون بارشوں کے سلسلے کے باعث چڑیا گھر کے جانوروں کے پنجروں میں بارش کا پانی کھڑا رہنے کے باعث بدبو اور جراثیم پھیل گئے ۔ چڑیا گھر میں سیاحوں کے لئے بنائے گئے فوﺅنٹین میں کئی کئی ماہ کا گندا پانی سبز شکل اختیار کر گیا ہے۔ برسات سے قبل جانوروں کو حفاظتی ٹیکے لگانے کا عمل بھی شروع نہیں کیا گیا۔ باوثوق ذرائع کے مطابق عملے کے اہلکار جانوروں کی دیکھ بھال کے بجائے مختلف جگہوں پر آرام کرتے نظر آتے ہیں۔ ذرائع کے مطابق مون سون کی بارشوں کے باعث پنجروں میں پانی کھڑا ہو گیا ہے جو کہ کئی ماہ سے اس طرح کھڑا ہے کہ اس کو نکالنے کا مناسب انتظام نہیں کیا گیا۔ ڈائریکٹر چڑیا گھر شفقت محمود سے بات کی گئی تو انہوںنے کہا کہ میں اس کی تردید کرتا ہوں چڑیا گھر میںجانوروں کی صفائی اور ان کی صحت کی سہولیات کا مکمل خیال رکھا جاتا ہے اس پر کوئی کمپرومائز نہیں کیا جاتا ۔ انہوں نے کہا کہ کسی بھی جانور کے پنجرے میں پانی نہیں کھڑا اور برسات کی آمد سے قبل جانوروں کے لئے حفاظتی ٹیکے لگائے جاتے ہیں ان کا انتظام کر لیا گیا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1