ڈاکٹر محمد قاسم اور مسرت عالم کی مسلسل نظر بندی پر اظہار تشویش

ڈاکٹر محمد قاسم اور مسرت عالم کی مسلسل نظر بندی پر اظہار تشویش

سرینگر(اے پی پی )مقبوضہ کشمیر میں مسلم لیگ جموں و کشمیرنے حریت رہنماﺅں ڈاکٹر محمد قاسم فکتو اور مسرت عالم بٹ کی مسلسل غیر قانونی نظر بندی پر سخت تشویش کا اظہار کیا ہے۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق مسلم لیک جموں و کشمیر کے ترجمان نے سرینگر میں ایک بیان میں کہا کہ قابض انتظامیہ جان بوجھ کر ڈاکٹر محمد قاسم فکتو اور مسرت عالم بٹ کی نظر بندی کو طول دے رہی ہے۔

 انہوں نے کہا کہ طویل غیر قانونی نظر بندی کی وجہ سے ڈاکٹر محمد قاسم فکتو کی صحت تشویش ناک حد تک گر گئی ہے اور انکی بینائی شدید طور پر متاثر ہوئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ مسرت عالم بٹ بھی نظر بندی کے باعث متعددامراض کا شکار ہو چکے ہیںاور ان پر لاگو کالا قانون عدالت کی طرف سے تین بار کالعدم قرار دیے جانے کے باوجود انہیں رہا نہیں کیا جا رہا۔ ترجما ن نے کہا کہ مسرت عالم کو مسلسل چوتھی بار پیشی کے لیے عدالت میں نہیں لایا گیا جو اس بات کی دلیل ہے کہ انکی نظر بندی کو جان بوجھ کر طول دیا جا رہا ہے۔ انہوں نے قابض ا نتظامیہ کی طرف سے حریت رہنماﺅں کے ساتھ روا رکھے جانے والے ناروا سلوک کی شدید مذمت کی ۔دریں اثناءبزرگ کشمیری حریت رہنما سید علی گیلانی کی سرپرستی میں قائم فورم کے ترجمان نے بھی مسرت عالم بٹ کو مسلسل چوتھی مرتبہ عدالت میں پیش نہ کرنے کے قابض انتظامیہ کے اقدام کی شدید مذمت کی ۔ انہوں نے مسرت عالم بٹ سمیت غیر قانونی طور پر نظر بند تمام حریت رہنماﺅں اور کارکنوں کی فوری رہائی کامطالبہ کیا۔

مزید : عالمی منظر