پاکستان وسائل سے مالا مال ، مستقبل روشن ہے:آسٹریلوی کونسلر

پاکستان وسائل سے مالا مال ، مستقبل روشن ہے:آسٹریلوی کونسلر

اسلام آباد(پ ر) آسٹریلیا نے کہا ہے کہ پاکستان وسائل اورصلاحیتوںسے مالا مال ملک ہے جس کا مستقبل انتہائی روشن ہے۔ پاکستان کا شمار جلد ہی دنیا کی ترقی یافتہ اقوام میں ہو گا۔اس ملک کے قدرتی وسائل اور زرعی شعبہ دنیا بھر کے سرمایہ کاروں کی توجہ کا مرکز بنا ہوا ہے ۔ یہ بات آسٹریلیا کے ہائی کمیشن میں اقتصادی امور کی سربراہ ملیسا کیلی نے ایف پی سی سی آئی کی سفارتی امور کی کمیٹی کے چئیرمین شیخ ہمایوں سعید اور چئیرمین میڈیا ملک سہیل سے ایک خصوصی ملاقات کے دوران کہی۔ انھوں نے کہا کہ پاکستان میںمتاثر کن ترقی کے تمام لوازمات موجود ہیں جنھیں توجہ دینے کی ضرورت ہے ۔ وسطی ایشیائی ، خلیجی اوروسط ایشیائی ریاستوں مشرق بعید کی تجارت میں پاکستان کو کلیدی حیثیت حاصل ہے ۔ دنیا کی دوسری بڑی نمک کی کان، پانچویں بڑی سونے کی کان، پانچویں بڑے کوئلے کے زخائر، ساتویں بڑے تانبے کے ذخائر پاکستان میں ہیں جو بڑی کنزیومر مارکیٹ ہے جہاں سرمایہ کاری میں نفع کی شرح کئی ممالک سے زیادہ ہے ۔ملیسا کیلی نے کہا کہ ایک آسٹریلوی وفد نے حال ہی میں پاکستان کا دورہ مکمل کرنے کے بعد بڑے پیمانے کا سرمایہ کاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔دونوں ممالک کے مابین توانائی اور زراعت سمیت مختلف شعبوں میں تعاون کے امکانات روشن ہیں۔اس موقع پر شیخ ہمایوں سعید نے کہا کہ پاکستان غیر ملکی سرمایہ کاروں کو کافی مراعات دے رہا ہے ۔ تمام بڑے بین الاقوامی سرمایہ کاروں اور کمپنیوں سیکورٹی چیلنجوں کے باوجود منافع کما رہے ہیں۔ملک سہیل حسین نے دو ممالک کے درمیان دوستانہ تجارتی اور اقتصادی تعلقات کے فروغ میں آسٹریلوی ہائی کمیشن کے کردار کی تعریف کی اور کہا کہ سابق ہائی کمشنر ٹم جارج نے مقامی کاروباری برادری سے ہر ممکن کیا اور انکی خدمات طویل عرصے یاد رکھاجائے گا۔ملک سہیل نے کہا ہے کہ پاکستان کے بارے میںمنفی پراپیگنڈے میں کوئی حقیقت نہیں۔ہم کاروبارکی آسانی میں علاقائی ممالک سے بہت بہتر ہیں۔ آسٹریلیا پاکستانی طلباءکی تیسری ترجیح ہے جسے مراعات سے بہتر بنایا جا سکتا ہے ۔

مزید : کامرس