لکی مروت کے بازاروں میں خواتین کاداخلہ بند

لکی مروت کے بازاروں میں خواتین کاداخلہ بند
لکی مروت کے بازاروں میں خواتین کاداخلہ بند

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

کوئٹہ(مانیٹرنگ ڈیسک) صوبہ خیبر پختونخواہ کے ضلع href="https://dailypakistan.com.pk/tag/لکی">لکی مروت کی تحصیل نورنگ میں گراں فروشی کے خلاف بلائے گئے ایک اجلاس میں علماء نے بغیر محرم کے خواتین کے بازاروں میں نکلنے پر پابندی عائد کرادی ہے جس کا شہر بھر میں اعلان بھی کرا دیا گیا ہے۔پولیس حکام کا کہنا ہے کہ ان کا اس تجویز سے کوئی تعلق نہیں ہے تاہم وہ فحاشی کے خلاف کاروائی ضرور کارروائی کریں گے۔ محکمہ تعلیم کے ریٹائرڈ افسر محمد اسلم خان کا کہنا تھا کہ مقامی علماء اور آئمہ کرام کی جانب سے یہ تجویز آئی ہے کی رمضان میں محرم کے بغیرخواتین کے بغیر محرم کے بازاروں میں آنے پر پابندی عائد کر دی جائے۔ جس کے بعد شہر میں اعلان کرایا گیا کہ خواتین بغیر محرم کے بازاروں میں نہ آئیں۔اسلم خان نے بتایا کہ ایسی کوئی بات نہیں ہوئی کہ اس فیصلے کی پابندی نہ کرنے والے کو کوئی سزا دی جائے گی بلکہ علاقے میں لوگ ایسے فیصلوں پر خود ہی عمل درآمد کرتے ہیں۔پولیس حکام کا کہنا ہے کہ ان کا اس فیصلے سے کوئی تعلق نہیں ہے یہ مقامی عمائدین کی تجویز تھی لیکن وہ فحاشی کے خلاف ضرور کارروائی کریں گے۔مقامی افراد کا کہنا ہے کہ علاقے میں بیشتر خواتین پردہ کرتی ہیں لیکن کچھ عرصے سے اب بازاروں میں خواتین بغیر پردے کے بھی خریداری کے لیے آتی ہیں جس سے مختلف مسائل جنم لیتے ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس