پانچ سال بعد سونے کی عالمی قیمتوں میں نمایاں کمی ریکارڈ، سونے کی خرید بڑھ گئی

پانچ سال بعد سونے کی عالمی قیمتوں میں نمایاں کمی ریکارڈ، سونے کی خرید بڑھ گئی
پانچ سال بعد سونے کی عالمی قیمتوں میں نمایاں کمی ریکارڈ، سونے کی خرید بڑھ گئی

  

دبئی(مانیٹرنگ ڈیسک)عالمی مارکیٹ میں سونے کی قیمت پانچ سال کی کم ترین سطح پر آگئی ۔تفصیلات کے مطابق آج صبح ابتدائی کاروبار کے دوران سونے کی قیمت میں 4 فیصد تک کمی دیکھنے میں آئی ہے۔ذرائع کے مطابق ایشیائی مارکیٹ میں اسپاٹ گولڈ کی قیمت فی اونس 1088 ڈالر تک گر گئی جو 26 مارچ 2010ءکو فی اونس 1100 ڈالر سے کم تھی۔صبح چین کے شنگھائی گولڈ ایکسچینج پر کچھ منٹ میں ہی سونے کی بھاری خریداری دیکھنے میں آئی۔چین سونے کا سب سے بڑا خریدار ہے اور چھ سال کے دوران جون میں چین کے سونے کے ذخائر 57 فیصد بڑھ گئے ہیں۔غیر ملکی نیوز ایجنسی کے مطابق 2009ءکے بعد پلاٹینم کی قیمتوں بھی سب سے زیادہ 5 فیصد تک کی کمی دیکھی گئی ۔ اس کے علاوہ چاندی کی قیمتوں میں بھی گراوٹ کا رجحان بڑھ رہا ہے ۔

واضح رہے کہ ایشیائی بازاروں میں امریکی ڈالر میں برتری کا اثر بھی سونے پر دیکھا جاسکتا ہے۔ماضی کے مقابلے سونے کی خریدو فروخت کے لئے سرمایہ کار وں کی توجہ امریکی ڈالر پر مبذول ہو چکی ہے ،امریکہ میں فیڈرل ریزرو کی جانب سے متوقع شرح سود میں اضافے کے پیش نظر ڈالر کی قوتِ خرید میں مضبوطی آنے کا امکان ہے۔

مزید : بین الاقوامی