پاکستان سے جانیوالا کوئی بھی عازمین مدینہ منورہ میں 8دن سے زیادہ نہیں رہ سکے گا

پاکستان سے جانیوالا کوئی بھی عازمین مدینہ منورہ میں 8دن سے زیادہ نہیں رہ سکے ...

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)سعودی وزارت حج نے مدینہ منورہ میں لازمی40نمازوں کا تاثر دور کرنے کے لیے نیا فیصلہ دے دیا ،پاکستان سے جانے والا کوئی بھی حاجی مدینہ منورہ میں 8دن نہیں رہ سکے گا 40 نمازیں پوری نہیں ہوں گی سعودی وزارت الحج نے مکہ سے 25ذو القعدکو مدینہ جانے والوں کو 3ذو الحج کو مدینہ سے نکلنے کا پابند کر دیا ،25کو مدینہ جانے والوں کا ایگریمنٹ 3ذو الحج تک کا ہو گا جو 26 ذو القعدکو جائیں گے وہ4ذو الحج کو آ سکیں گے جو27ذو القعدہ کو جائے گے ان کی واپسی 5ذو الحج کو ہو سکے گی،سعودی حکومت نے 40نمازیں مدینہ میں ضروری کا تاثر ختم کرنے کے لیے قدم اٹھایا ہے حالانکہ قرآن و سنت سے ثابت نہیں ہے سعودی ذرائع۔پاکستان سے جانے والوں نے 40نمازیں ضروری اور فرض اپنے پاس سے قرار دے رکھی ہیں حالانکہ 40نمازیں ایک ساتھ کسی جگہ بھی تسلسل سے ادا کر لی جائیں تو مقاصد حاصل ہو سکتے ہیں ،سعودی حکومت کی طرف سے 40نمازوں پر پابندی سے سب سے زیادہ اضطراب پاکستان سے جانے والوں میں پایا جاتا ہے، یہ حکم سرکاری اور پرائیویٹ حج سکیم میں تمام حاجیوں کے لیے ہو گا ۔

حج

مزید : صفحہ آخر


loading...