سندھ پنجاب بارڈز پر پولیس مقابلہ، سرغنہ سمیت اندھڑ گینگ کے 7ڈاکو مارے گئے

سندھ پنجاب بارڈز پر پولیس مقابلہ، سرغنہ سمیت اندھڑ گینگ کے 7ڈاکو مارے گئے

رحیم یارخان ‘ صادق آباد(بیورو نیوز، تحصیل رپورٹر) سندھ پنجاب بارڈر پر ماہی چوک کے قریب پولیس مقابلہ ‘غلام رسول چھوٹو گینگ کے دست راست اندھڑ گینگ کے سرغنہ سمیت سات ڈاکو پولیس کی فائرنگ سے ہلاک‘ مغوی ایوب اندھڑ بازیاب نہ کریا جاسکا تفصیل کے مطابق غلام رسول چھوٹو گینگ کے دست راست کے نام سے جانے جانے والے اندھڑ گینگ کے سرغنہ خان محمد عرف خانو سمیت ، مٹھو انڈھڑ، نادر انڈھڑ، لالو انڈھڑ، ثناء اللہ عرف سنو انڈھڑ، صغیر ولد منیر انڈھڑ اور ایک نامعلوم الاسم ماہی چوک کے قریب اس وقت پولیس مقابلہ میں مارے گئے جب پولیس کو اطلاع ملی تھی کہ مغوی ایوب اندھڑ اور ملزمان ایک خفیہ مقام پر موجود ہیں پولیس ذرائع کے مطابق پولیس پارٹی کو دیکھتے ہی ملزمان نے فائرنگ شروع کردی جوابی فائرنگ میں ساتوں ملزمان مارے گئے جبکہ جانو اندھڑ سمیت آٹھ ملزمان موقع سے فرار ہوگئے جب کہ چار روز قبل ماہی چوک سے اغوا کیا جانے والے ایو ب اندھڑ کا بھی تاحال سراغ نہیں لگایا جاسکا ہلاک ہونیوالے ڈاکوؤں میں خانو ‘ لالو‘ مٹھو ’ نادر سگے بھائی جبکہ صغیر ان کا بھتیجا بتایا جارہا ہے اس مقابلہ میں پولیس کی بھاری نفری نے حصہ لیا مقابلہ کے بعد ملزمان کی لاشوں کو تھانہ کوٹ سبزل منتقل کیا گیا تو شہریوں کی ایک بڑی تعداد امڈ آئی انہوں نے پنجاب پولیس زندہ باد کے نعرے لگائے ذرائع کے مطابق اندھڑ گینگ غلام رسول چھوٹو کا دست راست مانا جاتا تھا ماضی میں جب بھی پولیس کچہ میں چھوٹو گینگ کیخلاف آپریشن کرتی یہ گینگ ماہی چوک میں پولیس پارٹی پر فائرنگ شروع کردیتے کچہ آپریشن کے دوران اندھڑ گینگ کے بیشتر ارکان کچہ جمال میں موجود تھے مگر فوجی آپریشن سے قبل فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے پولیس ذرائع نے بتایا کہ اندھڑ گینگ کے یہ ارکان سندھ پنجاب پولیس کو اغوا برائے تاوان‘ قتل ڈکیتی اور پولیس مقابلوں کی درجنوں وارداتوں میں مطلوب تھے ‘ اس گینگ نے تازہ ترین واردات چار روز قبل ماہی چوک سے ایوب نامی تاجر کوا غوا کرکے کی تھی جس کے بعد سے پولیس ان کے پیچھے تھی اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے ڈی ایس پی مہر ناصر نے کہا عوام کے جان و مال کا تحفظ پولیس کی ذمہ داری ہے مغوی ایوب کو بھی جلد بازیاب کرالیا جائیگا۔

ڈاکو مارے گئے

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...