ضلع ناظم مایار اکثریت کھو بیٹھے ہیں ،افتخار علی مشوانی

ضلع ناظم مایار اکثریت کھو بیٹھے ہیں ،افتخار علی مشوانی

بخشالی (نمائندہ پاکستان) رکن صوبائی اسمبلی و چیئرمین ڈیڈک کمیٹی افتخار مشوانی نے مردان جرنلسٹس فورم کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ضلعی ناظم حمایت اللہ مایار اور تحصیل ناظم تخت بھائی ممتاز مہمند اکثریت کھو بیٹھے ہیں اور حکم امتناعی کے پیچھے چھپ رہے ہیں ان دونوں کے پاس نظامت کا کوئی جواز باقی نہیں ہے، ضلع ناظم اور تحصیل ناظم تخت بھائی کو مستعفی ہو جانا چاہیئے، تحصیل ناظم تخت بھائی کی اپنی ہی پارٹی کے کونسلران انکی پارٹی کے اندرونی اختلافات کے باعث انکے مخالف ہیں جس کے باعث وہ اپنی اکثریت کھو بیٹھے ہیں، تحریک انصاف نے تخت بھائی سے تعلق رکھنے والے کسی بھی جماعت کے کونسلر کو کوئی ترقیاتی پروجیکٹ یا ملازمت دینے کا وعدہ نہیں کیا، ان کا مزید کہنا تھا کہ محکمہ پولیس میں کی گئیں اصلاحات تبدیلی کی واضح دلیل ہیں، پولیس سے سیاسی مداخلت کا مکمل خاتمہ کردیا ہے اب پولیس اہلکاروں کی تقرریاں اور تبادلہ ایم این اے اور ایم پی اے کی مرضی سے نہیں بلکہ میرٹ کی بنیاد پر ہوتے ہیں، پٹواری سسٹم کو مکمل تبدیل کردیا اور اصلاحات کے ذریعے تمام چور دروازے ہمیشہ کیلئے بند کردیئے ہیں، افتخار مشوانی کا مزید کہنا تھا کہ کارکنان کے درمیان اختلافات کے خاتمے کیلئے ترجیحی بنیادوں پر سرگرمیاں جاری ہیں اور پارٹی کے ناراض کارکنان کو منانے کا سلسلہ بھی جاری ہے، پارٹی کارکن شہید عبدالرحمن کے حوالے سے انہوں نے بتایا کہ شہید عبدالرحمن کے بھائی سے رابطے میں ہوں ، انکے اہل خانہ سے کئے گئے وعدے جلد پورے کریں گے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...