کاہنہ مویشی منڈی میں بیوپاری عدم انتظامات پر پھٹ پڑے

کاہنہ مویشی منڈی میں بیوپاری عدم انتظامات پر پھٹ پڑے

  

کاہنہ (نا مہ نگار)کاہنہ کاچھا مویشی منڈی میں بھی بنیادی سہولیات کا فقدان، دور دراز سے آنے والے بیوپاری پریشان بجلی اور پانی کی عدم دستیابی پر پھٹ پڑے۔ تفصیلات کے مطابق کاہنہ کاچھا میں لگائی جانے والی مویشی منڈی میں بجلی کی دستیابی سے متعدد بیوپاری محروم نظر آتے ہیں جس کے باعث مویشیوں کو بروقت پانی پلانے کیلئے بھی شدید پریشانی ہے۔ سروے میں پول کھل گئے۔ راجن پور سے آئے بیوپاری امین، اوکاڑہ سے ریاض نے کہا کہ ہمارے مویشی پانی کی بوندھ بوندھ کو ترس گئے ہیں۔ باٹا پور سے آنے والے شمس نے کہا کہ ایک تو کاروبار نہیں اور دوسری طرف انتظامیہ بھی پریشان کر رہی ہے۔ کوئی پوچھنے والا نہیں جبار، مجید، واحداور دیگر نے بھی کہا کہ تبدیلی سرکار نے تبدیلی کے نام پر ووٹ تو لئے لیکن عوام کو ریلیف نظر نہیں آرہا۔

سٹی گورنمنٹ نے مویشی منڈیاں تو لگا دیں لیکن بیوپاریوں کی عید خراب نہ کرے جبکہ ڈپٹی کمشنر لاہور دانش افضال نے اپنے موقف میں کہا کہ پورے لاہور میں مویشی منڈیوں میں بنیادی سہولیات یقینی بنایا جا رہا ہے اور ایس او پیز پر سختی سے عملدرآمد کروایا جا رہا ہے۔

کیونکہ ہمارا ملک خونیں تصادم کامتحمل نہیں ہوسکتا۔ان خیالات کااظہار انہوں نے گذشتہ روز اپنے حلقے میں کارکنوں سے گفتگوکرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہاکہتبدیلی سرکار کے عوام کو ریلیف دینے کے سب دعوے ہوا میں اڑگئے۔غریب آدمی کی زندگی سہل ہونے کے بجائے دن بہ دن اور کٹھن ہوتی جا رہی ہے۔ملک اناڑی کپتان اور ناہل ٹیم کی مزید تباہ کاریوں کا متحمل نہیں ہو سکتا۔ حکومت عوام کی سہولت کے لیئے جلد مثبت اقدام لے ورنہ اسے گھرجانا ہوگا۔انہوں نے کہا کہ،نوازشریف شہباز شریف اور ن لیگ کی سچائی کی گواہی وقت دے گا،حکومت نے جھوٹے وعدے اور خواب دکھا کر سیاسی فراڈ کیاگیا دس ہزار ارب روپے قرض لے کر ہرباکستانی کو مقروض کر دیا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -