کورونا کا دنیا پرپھر بڑا حملہ، مسلسل دوسرے روز ریکارڈ کیسز، 24گھنٹوں میں 2لاکھ 59ہزار 848نئے مریض سامنے آئے، امریکہ، بھارت، برازیل، جنوبی افریقہ میں حالات تشویشناک، پاکستان میں اموات، مریضوں میں کمی

    کورونا کا دنیا پرپھر بڑا حملہ، مسلسل دوسرے روز ریکارڈ کیسز، 24گھنٹوں میں ...

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک این این آئی) دنیا کے بیشتر ممالک میں کورونا کی نئی لہر شروع ہو گئی ہے جس کے باعث دنیا بھر میں کورونا کیسز میں مسلسل دوسرے روز ریکارد اضافہ ہوا عالمی ادارہ صحت نے آگاہ کیا ہے کہ لگاتار دوسرے دن کورونا وائرس کے ریکارڈ تعداد میں مریض سامنے آئے ہیں اور مریضوں کی مجموعی تعداد میں گذشتہ 24 گھنٹوں میں 2لاکھ 59 ہزار 848 کا اضافہ ہوا ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق عالمی ادارہ صحت کی ایک رپورٹ میں کہاگیاکہ سب سے زیادہ متاثرین امریکہ، انڈیا، برازیل، اور جنوبی افریقہ سے سامنے آئے۔ اس سے پہلے کا یومیہ ریکارڈ ایک روز قبل قائم ہوا تھا جب دو لاکھ 37 ہزار 743 متاثرین سامنے آئے تھے۔یومیہ ہلاکتوں کی تعداد سات ہزار 360 رہی جو کہ 10 مئی سے اب تک کی سب سے بڑی تعداد ہے۔جولائی میں یومیہ ہلاکتوں کی تعداد 4800 تک رہی ہے جو کہ جون میں 4600 فی دن سے تھوڑی سی زیادہ ہے۔دوسری طر ف چین کے مشرقی صوبے سنکیانگ کے دارالحکومت ارمچی میں کورونا وائرس کیسز میں اضافے کے بعد حالتِ جنگ کا اعلان کر دیا گیا ہے اعداد و شمارمیں بتایاگیاکہ یہاں 17 نئے مریض سامنے آئے تھے جس کے بعد آمد و رفت پر کڑی پابندیاں عائد کی گئیں۔حالانکہ یہ اعداد و شمار بظاہر معمولی ہیں لیکن چین میں ووہان کے علاوہ ملک کے دیگر علاقوں میں وائرس کا نمایاں پھیلاؤ نہیں دیکھا گیا۔بھارت میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے انتالیس ہزار نئے کیس ریکارڈ کیے گئے۔ یوں دنیا کی اس سب سے بڑی جمہوریت میں کورونا وائرس کی وبا سے متاثرہ افراد کی مصدقہ تعداد اب دس لاکھ 77 ہزار سے زائد ہو گئی ہے۔ناقدین کا کہنا ہے کہ بھارت میں ٹیسٹوں کی سہولت محدود پیمانے پر دستیاب ہے، اس لیے حقیقی کیسوں کی تعداد کہیں زیادہ ہو سکتی ہے۔ اس وائرس کی وجہ سے بھارت میں ہلاکتوں کی تعداد اب اٹھائیس ہزار آٹھ سو سولہ بتائی جا رہی ہے۔امریکا میں کورونا وائرس کی وجہ سے ہلاکتوں کی مجموعی تعداد ایک لاکھ چالیس ہزار ہو گئی ہے۔ حکام نے بتایا کہ پچاس میں سے 43 ریاستوں میں اس وبا میں شدت دیکھی جا رہی ہے۔ جون کے بعد سے امریکا میں کورونا وائرس کی نئے کیسز میں بدستور اضافہ ہو رہا ہیآسٹریلیا کے دوسرے سب سے گنجان آباد شہر میلبورن میں کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز کے پیش نظر ہر کسی کے لیے حفاظتی ماسک پہننا لازمی قرار دے دیا گیا ہے۔ریاست وکٹوریہ کے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ میلبورن کے رہائشی اپنے گھروں میں ہی رہیں اور صرف کسی بہت ضروری کام کے لیے ہی باہر نکلیں۔اس ریاست میں ہلاکتوں کی مجموعی تعداد اب تک 122 ہو چکی ہے۔ وکٹوریہ کی دیگر ریاستوں کے سرحدیں بدستور بند ہیں جبکہ ملک کے دیگر علاقوں میں لاک ڈاؤن میں نرمی کی جا رہی ہے۔دنیا بھر میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 1 کروڑ 45لاکھ 27 ہزار 734 تک جا پہنچی ہے جبکہ اس موذی وائرس سے ہلاکتیں 6 لاکھ 4 ہزار 963 ہو گئیں۔کورونا وائرس کے دنیا بھر میں 52 لاکھ 4 ہزار 666 مریض اسپتالوں، قرنطینہ مراکز میں زیرِ علاج اور گھروں میں آئسولیشن میں ہیں، جن میں سے 60 ہزار 73 کی حالت تشویش ناک ہے جبکہ 86 لاکھ 18 ہزار 105 مریض صحت یاب ہو چکے ہیں۔امریکی میڈیارپورٹس کے مطابق امریکا تاحال کورونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثرہ ملک ہے جہاں ناصرف کورونا مریض بلکہ اس سے ہلاکتیں بھی اب تک دنیا کے تمام ممالک میں سب سے زیادہ ہیں۔امریکا میں کورونا وائرس سے اب تک 1 لاکھ 42 ہزار 877 افراد موت کے منہ میں پہنچ چکے ہیں جبکہ اس سے بیمار ہونے والوں کی مجموعی تعداد 38 لاکھ 33 ہزار 271 ہو چکی ہے۔کورونا وائرس کے امریکا میں 19 لاکھ 15 ہزار 175 مریض اسپتالوں، قرنطینہ مراکز میں زیرِ علاج اور گھروں میں آئسولیشن میں ہیں، جن میں سے 16 ہزار 673 کی حالت تشویش ناک ہے جبکہ 17 لاکھ 75 ہزار 219 کورونا مریض اب تک شفایاب ہو چکے ہیں۔کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد کے حوالے سے ممالک کی فہرست میں برازیل دوسرے نمبر پر ہے جہاں یہ وائرس 78 ہزار 817 زندگیاں نگل چکا ہے جبکہ کورونا مریضوں کی تعداد 20 لاکھ 75 ہزار 246 تک جا پہنچی ہے۔بھارت کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں تیزی سے اضافیکے ساتھ اس فہرست میں تیسرے نمبر پر پہنچ گیا ہے، جہاں کورونا سے 26 ہزار 828 ہلاکتیں ہو چکی ہیں جبکہ اس سے متاثرہ مریضوں کی تعداد 10 لاکھ 77 ہزار 864 ہو گئی۔کورونا وائرس سے روس میں کل اموات 12 ہزار 247 ہو گئیں جبکہ اس کے مریضوں کی تعداد 7 لاکھ 65 ہزار 437 ہو چکی ہے۔ساوتھ افریقہ میں کورونا وائرس کی وبا سے مجموعی اموات 4 ہزار 948 ہو چکی ہیں، جہاں اس وائرس کے اب تک کل کیسز 3 لاکھ 50 ہزار 879 رپورٹ ہوئے ہیں۔پیرو میں کورونا کے باعث 12 ہزار 998 ہلاکتیں اب تک ہو چکی ہیں جبکہ یہاں کورونا کیسز 3 لاکھ 49 ہزار 500 رپورٹ ہوئے ہیں۔میکسیکو میں کورونا وائرس سے کل اموات کی تعداد 38 ہزار 888 ہو گئی جبکہ کورونا کے کیسز 3 لاکھ 38 ہزار 913 ہو گئے۔چلی میں کورونا وائرس سے جاں بحق ہونے والوں کی تعداد 8 ہزار 445 ہو گئی جبکہ کورونا کے کل کیسز 3 لاکھ 28 ہزار 846 ہو گئے۔اسپین میں کورونا وائرس کی وبا سے اموات 28 ہزار 420 ہو گئیں جبکہ اب تک اس کے 3 لاکھ 7 ہزار 335 مصدقہ متاثرین سامنے آئے ہیں۔برطانیہ میں کورونا سے اموات کی تعداد 45 ہزار 273 ہوگئی جبکہ کورونا کے کیسز کی تعداد 2 لاکھ 94 ہزار 66 ہو چکی ہے۔ایران میں کورونا وائرس سے مرنے والوں کی کل تعداد 13 ہزار 979 ہو گئی جبکہ کورونا کے کل کیسز 2 لاکھ 71 ہزار 606 ہو گئے۔

کورونا نیا حملہ

واشنگٹن (اظہر زمان، بیورو چیف) عالمی معاشرہ ٹوٹنے کے مرحلے پر پہنچ گیا ہے اور ”کووڈ 19“ کی وباء نے ایکسرے کی طرح نازک سوسائیٹیوں کے سارے عیب ظاہر کر دیئے ہیں یہ تبصرہ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل نے نیلسن منڈیلا سالانہ خطاب کے دوران کیا جس کی تفصیلات نیو یارک میں اقوام متحدہ کے دفتر نے جاری کی ہیں۔انہوں نے کہا کہ کورونا وائرس کی وباء جس طرح پھیلی ہے اور اس پر جیسا ردعمل سامنے آیا ہے اس سے دنیا بھر کے ممالک کے عیوب،خرابیاں اور جھوٹ کھل کر منظر عام پر آ گئے ہیں ایک جھوٹ یہ ہے کہ آزاد مارکیٹیں تمام افراد کو ہیلتھ کیئر فراہم کر سکتی ہیں یہ افسانہ بھی سننے میں آیا کہ صحت کی حفاظت کے کام کا معاوضہ نہیں یہ بھی ایک سراب ہے کہ ہم ایک ایسی دنیا میں رہ رہے ہیں جہاں نسل پرستی ختم ہو چکی ہے اور یہ بھی ایک مفروضہ ہے کہ ہم سب ایک ہی کشتی میں سوار ہیں۔ اقوام متحدہ کے سربراہ نے مزید کہا کہ ترقی یافتہ ممالک اپنے آپ کو بچانے کیلئے سرمایہ کاری کر رہے ہیں اور وہ اس خطرناک وقت میں ترقی پذیر ملکوں کو ضروری امداد فراہم کرنے میں ناکام رہے ہیں سیکرٹری جنرل کا خطاب جنوبی افریقہ کے سابق صدر اور نوبل انعام یافتہ نیلسن منڈیلا کے جنم دن کی تقریبات کا حصہ تھا نسلی منافرت کے خلاف جدوجہد کرنے والے نیلسن منڈیلا کی یاد تازہ کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ دنیا اس امر پر کیوں خاموش ہے کہ دنیاکے 26 امیر ترین افراد نے اپنی دولت سمیٹ رکھی ہے جتنی دنیا کی آدھی آبادی کے پاس ہے یہ سب سے بڑی ناانصافی ہے اور اس کے علاوہ پوری دنیا کے شہریوں سے ہونے والی ناانصافی کا تعلق نسل، جنس اور مقام پیدائش سے ہے انہوں نے کہا کہ نوآبادی نظام کی میراث ابھی تک دیکھنے میں آ رہی ہیں جو عالمی طاقتوں کے تعلقات میں بہت نمایاں ہے۔

اقوام متحدہ

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں)پاکستان میں مہلک کورونا وائرس کے پھیلاؤ میں ٹھہراؤ دیکھا جارہا ہے اور گزشتہ کئی روز سے یومیہ کیسز اور اموات کی تعداد کم ہوئی ہے۔ ملک میں شفایاب ہونے والوں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے اور اب تک 75 فیصد سے زائد مریض مکمل صحتیاب ہوچکے ہیں۔ملک بھر میں اتوار کے روز کورونا سے مزید 38 افراد جاں بحق، 1554 نئے کیسز بھی رپورٹ ہوئے جس سے اموات کی تعداد 5590 ہوگئی جبکہ نئے کیسز سامنے آنے کے بعد مریضوں کی تعداد 264581 تک جا پہنچی ہے اب تک پنجاب میں 2079، سندھ میں 1993 اور خیبر پختونخوا میں 1142 افراد جاں بحق ہو چکے ہیں جب کہ اسلام آباد میں 157، بلوچستان میں 131، آزاد کشمیر میں 47 اور گلگت بلتستان میں 41 افراد کا انتقال ہوا ہے۔اتوارکورونا کے مزید 1544 کیسز اور 37 ہلاکتیں رپورٹ ہوئی ہیں جن میں سندھ میں 19 ہلاکتیں اور 889 کیسز، پنجاب سے 328 کیسز 12 اموات جب کہ کے پی کے سے196 کیسز 3 اموات اور گلگت سے 11 کیسز 2 اموات رپورٹ ہوئی ہیں۔اس کے علاوہ آزاد کشمیر سے 48 کیسز اور ایک ہلاکت جب کہ اسلام آباد سے 72 کیسزاور بلوچستان میں 10کیسز اور ایک ہلاکت سامنے آئی۔پنجاب سے کو رونا کے 328 کیسز اور 12 ہلاکتیں رپورٹ ہوئی ہیں جن کی تصدیق سرکاری پورٹل پر کی گئی ہے۔سرکاری پورٹل کے مطابق پنجاب میں کورونا کے مریضوں کی کْل تعداد 89793اور ہلاکتیں 2079 ہو چکی ہیں۔صوبے میں اب تک کورونا کے 65436 مریض صحتیاب بھی ہوچکے ہیں۔اتوار کو خیبرپختونخوا میں کورونا وائرس کے باعث مزید 3 افراد جاں بحق ہو گئے جس کے بعد ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 1142 ہوگئی۔صوبائی محکمہ صحت کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا سے پشاور میں 2 اور سوات میں ایک شخص انتقال کرگیا۔ صوبائی محکمہ صحت نے بتایا کہ گزشتہ 24 گھنٹوں کے درمیان مزید 196 افراد میں مہلک وائرس کی تشخیص ہوئی جس کے بعد متاثرہ مریضوں کی تعداد 32086 تک جا پہنچی ہے۔سرکاری پورٹل کے مطابق اب تک صوبے میں 25006 افراد کورونا وائرس سے صحت یاب بھی ہو چکے ہیں۔گلگت بلتستان سے ا کورونا کے مزید 11 کیسز اور دو ہلاکتیں رپورٹ ہوئی ہیں جن کی تصدیق سرکاری پورٹل پر کی گئی ہے۔پورٹل کے مطابق گلگت میں کورونا کے مریضوں کی کل تعداد 1807ہوگئی ہے جب کہ وہاں اموات کی تعداد 41 ہے۔گلگت میں کورونا سے صحتیاب ہونے والوں کی تعداد 1460 ہے۔آزاد کشمیر سے بھی کورونا کے مزید 48 کیسز اور ایک ہلاکت سامنے آئی ہے۔آزاد کشمیر میں اب تک مجموعی طور پر 1888 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوچکی ہے جب کہ وہاں اموات کی تعداد 47 ہوگئی ہے۔ا?زاد کشمیر میں اب تک کورونا سے 1174 افراد صحتیاب ہوچکے ہیں۔وفاقی دارالحکومت سیکورونا کے مزید 72 کیسز سامنے آئے ہیں جو سرکاری پورٹل پر رپورٹ ہوئے ہیں۔پورٹل کے مطابق اسلام آباد میں کورونا کے مریضوں کی کل تعداد 14576 اور ہلاکتیں 157 ہو گئی ہیں۔اس کے علاوہ شہر میں کورونا سے صحتیاب ہونے والوں کی تعداد 11917 ہوگئی ہے۔سندھ میں بھی کورونا کے باعث مزید 19 افراد انتقال کرگئے جس کے بعد صوبے میں ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 1993 ہوگئی ہے۔وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 889 افراد میں کورونا کی تصدیق ہوئی ہے جس کے بعد صوبے میں مصدقہ کیسز کی تعداد 113007 ہوگئی ہے۔اس کے علاوہ صوبے میں اب تک 92037 مریض صحتیاب ہوچکے ہیں۔بلوچستان میں کورونا کے باعث اب تک 11405 متاثر اور 131 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔ اس کے علاوہ بلوچستان میں اب تک کورونا سے 8313 مریض صحتیاب بھی ہوچکے ہیں این سی او سی کے مطابق پاکستان میں کورونا کیسز کی تعداد تیزی سے کم ہو رہی ہے اور گزشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا کے صرف ایک ہزار 579 کیسز رپورٹ ہوئے جس کے بعد کیسز 2 لاکھ 63 ہزار 496 تک پہنچ گئے۔ ملک بھر میں کورونا سے صحت یاب افراد کی تعداد 2 لاکھ 4 ہزار 276 ہوگئی ہے، فعال کیسز کی تعداد 53 ہزار 652 ہے۔ادھر پاکستانی وزیر اعظم عمران خان نے عوام سے اپیل کی ہے کہ وہ بالخصوص عید الاضحیٰ کے موقع پر احتیاط برتیں اور اس وائرس کو شکست دینے میں اپنا کردار ادا کریں۔ اپنی ایک ٹویٹ میں انہوں نے کہا کہ کورونا کے مریضوں کی تعداد اور شرح اموات دونوں کم ہوئی ہیں، جس کی وجہ ان کی حکومت کی حکمت عملی ہے۔

پاکستان ہلاکتیں

مزید :

صفحہ اول -