چار ماہ تعطل کے بعد پاکستان میں انسداد پولیو مہم کا آج سے دوبارہ آغاز ہو گیا

چار ماہ تعطل کے بعد پاکستان میں انسداد پولیو مہم کا آج سے دوبارہ آغاز ہو ...
چار ماہ تعطل کے بعد پاکستان میں انسداد پولیو مہم کا آج سے دوبارہ آغاز ہو گیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) کورونا وائرس کے باعث چار ماہ تعطل کے بعد پاکستان میں آج سے انسداد پولیو مہم شروع ہو گئی۔کراچی، کوئٹہ، فیصل آباد، اٹک اور جنوبی وزیرستان سرفہرست، انسداد پولیو مہم میں آٹھ ہزار سے زائد ورکرز حصہ لیں گے۔

اگست، ستمبرمیں بڑے پیمانے پر ملک گیر پولیو مہم چلائی جائےگی، لاپرواہی سے اپنے بچوں کومحفوظ رکھنے کیلئے تعاون اور پولیو ویکسین پلان اہم ہے ۔گھر گھر مہم، پولیو کے ساتھ کورونا وبا، ماسک، سماجی فاصلے سے متعلق شعور کیلئے ضروری ہے۔خیال رہے کہ پولیو مہم چار ماہ قبل 20 مارچ کو کورونا کے باعث تعطل کا شکار ہوئی تھی۔

یاد رہے کہ رواں سال ملک بھر میں پولیو کیسز کی مجموعی تعداد 30 ہو گئی ہے۔ گزشتہ ماہ بلوچستان میں پولیو وائرس کا نیا کیس سامنے آیا تھا۔محکمہ صحت کے مطابق بلوچستان کے ضلع دکی میں 3 ماہ کے بچے میں پولیو وائرس کی تصدیق ہوئی ہے جس کے بعد بلوچستان میں رواں سال پولیو وائرس کے کیسز کی تعداد 13 ہو گئی ہے۔اس سے قبل 14 مارچ کو سندھ میں 48 ماہ کی بچی میں پولیو وائرس کی تشخیص ہوئی تھی۔

11 مارچ کو بھی پولیو کے دو نئے کیسز سامنے آئے تھے، ترجمان انسداد پولیو پروگرام کا کہنا تھا کہ نئے پولیو کیسز خیبر پختونخوا اور بلوچستان سے رپورٹ ہوئے ۔انہوں نے بتایا کہ خیبرپختونخوا کے علاقے ٹانک سے 36 ماہ کے بچے میں وائرس کی تصدیق ہوئی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ بلوچستان سے ژوب کے علاقے سے 24 ماہ کا بچہ پولیو وائرس کا شکار ہو گیا۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -علاقائی -اسلام آباد -