گیلانی عدالت کے مختصر فیصلے کو تسلیم کرلیتے تو یہ دن دیکھنا نہ پڑتا:چودھری نثار

گیلانی عدالت کے مختصر فیصلے کو تسلیم کرلیتے تو یہ دن دیکھنا نہ پڑتا:چودھری ...
گیلانی عدالت کے مختصر فیصلے کو تسلیم کرلیتے تو یہ دن دیکھنا نہ پڑتا:چودھری نثار

  

اسلام آباد (ثناءنیوز )قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف چودھری نثار علی خان نے کہا کہ اگر یوسف رضا گیلانی سپریم کورٹ کے مختصر فیصلے پر عمل کر لیتے تو آج ان کو یہ دن دیکھنا نہ پڑتا اس طرح ان کی اور ان کی جماعت کی عزت ہوتی، گیلانی کو ہٹائے جانے کے بعد چوہدری احمد مختار کو وزیر اعظم بنائے جانے سے آصف علی زرداری کی شروع دن کی خواہش پوری ہو گی۔ایک نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے چودھری نثار علی خان نے کہا کہ وزیر اعظم کی نا اہلی ایک عبرت کا مقام ہے اگر یوسف رضا گیلانی عدالتی فیصلہ آنے پر ہی سر تسلیم خم کر لیتے تو ان کے ساتھ ساتھ پیپلز پارٹی اور جمہوری نظام کی بھی عزت ہوتی۔اس ملک میں ایک رجحان بن گیا ہے کہ جو بھی اقتدار میں آتا ہے اسے زبردستی ہٹانا پڑتا ہے۔ چودھری نثار علی خان نے کہاکہ سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد میری جماعت کا یہ موقف سچ ثابت ہو گیا ہے کہ گیلانی وزیر اعظم نہیں رہے چودھری نثار علی خان نے کہا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد ہم نے گیلانی کو اسمبلی میں آنے سے بھی روکا اور بجٹ سے بھی مکمل بائیکاٹ کیا اور ہرمقام پر ان کے سامنے کھڑے ہوئے۔جہاں تک زرداری کی اس خواہش کا تعلق ہے کہ وہ احمد مختار کو شروع دن سے وزیر اعظم بنانا چاہتے تھے اور گیلانی کے وزیر اعظم بننے کے بعد انہوں نے گیلانی کو تبدیل کرنے کے لیے مسلم لیگ(ن) کی مدد مانگی تھی میرے خیال میں آج زرداری کی یہ خواہش پوری ہو گئی ہے۔

مزید :

اسلام آباد -