پاکستانی معیشت کے استحکام میںکردار ادا کرنا چاہتے ہیں، کورین سفیر

پاکستانی معیشت کے استحکام میںکردار ادا کرنا چاہتے ہیں، کورین سفیر

  

لاہور (کامرس رپورٹر) پاکستان میں کوریا کے سفیر ڈاکٹر سونگ ہوان نے کہا ہے کہ دونوں ممالک کے درمیان تجارت کو فروغ دینے کے لیے کوریا اور پاکستان کے تاجروں کے درمیان روابط مزید مستحکم کرنے کے لیے ہر ممکن اقدامات اٹھائے جارہے ہیں۔ وہ لاہور چیمبر کے قائم مقام صدر میاں طارق مصباح سے لاہور چیمبر میں ملاقات کے موقع پر اظہار خیال کررہے تھے۔ کورین قونصلر پارک جنگ ہو، کوریا ٹریڈ اینڈ انویسٹمنٹ پروموشن ایجنسی کے ڈائریکٹر جنرل سنگ بائنگ ہون، لاہور چیمبر کے سابق صدور میاں مظفر علی، عرفان قیصر شیخ اور سابق سینئر نائب صدر ملک طاہر جاوید نے بھی خطاب کیا جبکہ ایگزیکٹو کمیٹی رکن میاں زاہد جاوید اور سابق رُکن رحمت اللہ جاوید بھی اس موقع پر موجود تھے۔ سفیر نے کہا کہ ٹھوس حکمت عملی ترتیب دیکر پاکستان اور کوریا کے درمیان تجارت کی راہ میں حائل رکاوٹیں دور کی جاسکتی ہیں، کوریا تجارتی معلومات کا تبادلہ کرکے پاکستانی معیشت کے استحکام میںکردار ادا کرنا چاہتا ہے۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ مستقبل قریب میں دوطرفہ تجارت بڑھے گی کیونکہ دونوں ممالک کی حکومتیں اس سلسلے میں ٹھوس اقدامات اٹھارہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک ایک دوسرے کے تجربات سے بڑے پیمانے پر استفادہ کرسکتے ہیں۔ انہوں نے لاہور چیمبر پر زور دیا کہ وہ تجارتی مواقعوں کا جائزہ لینے کے لیے ایک وفد کوریا بھجوائے۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے لاہور چیمبر کے قائم مقام صدر میاں طارق مصباح نے کہا کہ ساﺅتھ کوریا پاکستان کا اہم تجارتی حصے دار ہے، سال 2013ءمیں دونوں ممالک کے درمیان تجارت کا حجم 1.26ارب ڈالر رہا جو بہت اطمینان بخش ہے مگر تجارت میں مزید اضافے کی گنجائش ہے۔

ٹیلی کمیونیکیشن، الیکٹرانکس، کیمیکل، آٹوموبائل اور تعمیرات کے شعبوں میں مشترکہ منصوبہ سازی دونوں ممالک کے بہترین تجارتی تعلقات کا ثبوت ہے۔

 انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک کے کمرشل سیکشنز کے درمیان روابط کا فروغ، مشاورتی عمل اور تجارت کے لیے مزید اشیاءمتعارف کرواکر باہمی تجارت بڑھائی جاسکتی ہے جبکہ نجی شعبے کا کردار بھی بہت اہمیت کا حامل ہے۔ پاکستان میں کوریا کی سرمایہ کاری میں اضافے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے لاہور چیمبر کے قائم مقام صدر نے کہا کہ پاکستان ایک بڑی مارکیٹ ہے، اس کی جغرافیائی حیثیت بہترین ہے، یہ وسطیٰ ایشیائی ریاستوں تک رسائی کا اہم ذریعہ ہے اور چین اور بھارت کے درمیان واقع ہے جس سے کوریا کے سرمایہ کاروں کو بھرپور فائدہ اٹھانا چاہیے۔ میاں طارق مصباح نے کورین سفیر کو آگاہ کیا کہ لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری نے آئی ایف سی کے اشتراک سے عالمی معیار کا ثالثی سنٹر قاوم کیا ہے جو تاجروں کو اُن کے کاروباری تنازعات عدالت سے باہر نمٹانے میں مدد دے رہا ہے۔

مزید :

کامرس -