وکی لیکس نے 50ممالک کے درمیان خفیہ ترین تجارتی معاہدہ بے نقاب کردیا

وکی لیکس نے 50ممالک کے درمیان خفیہ ترین تجارتی معاہدہ بے نقاب کردیا
وکی لیکس نے 50ممالک کے درمیان خفیہ ترین تجارتی معاہدہ بے نقاب کردیا

  

لندن(نیوز ڈیسک) دنیا بھر کی حکومتوں کے راز فاش کرنے والے ارادے وکی لیکس نے ایک تازہ انکشاف میں بتایا ہے کہ دنیا میں 50بڑے ممالک نے اپنے مالی مفادات اور کاروباری پھیلاﺅ کو وسعت دینے کےلئے ایک خفیہ معاہدہ کرلیا ہے۔ وکی لیکس کی ویب سائٹس نے ایک بیان میں کہا ہے کہ امریکہ کی قیادت میں انگلینڈ ،فرانس اور جرمنی سمیت 50ممالک نے فنانشل سروسز انیکس نامی خفیہ دستاویزات تیار کرلی ہے جس کے مطابق ان ممالک کے کثیر الملکی مالیاتی اداروں پر پابندیاں کم کی جائیں گی تاکہ یہ اپنی خدمات دنیا بھر میں باآسانی پھیلا سکیں۔2007-08ءکے عالمی مالیاتی بحران کے بعد ملٹی نیشنل مالیاتی اداروں کےلئے سخت قوائد و ضوابط کا راستہ روکنا ہے تاکہ معاہدے میں شامل ممالک دنیا پر اپنی مالی پکڑ مزید مضبوط کرسکیں۔ بیان میں یہ دعویٰ بھی کیا گیا ہے کہ امریکہ کی بھر پور خواہش ہے کہ لوگوں کی ذاتی اور مالیاتی معلومات کی بین الاقوامی منتقلی کو بڑھایا جائے۔وکی لیکس کے بانی جولین اسانج نے لندن میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے یہ بھی بتایا کہ وہ سویڈن میں اپنے خلاف لگائے گئے جنسی جرائم کے الزامات کے خلاف نئی قانونی کارروائی کا آغاز کرنے کی تیاری کررہے ہیں۔

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی -