خود کار ’گھریلو ‘ہیلی کاپٹر بنانے کی تیاریاں

خود کار ’گھریلو ‘ہیلی کاپٹر بنانے کی تیاریاں
خود کار ’گھریلو ‘ہیلی کاپٹر بنانے کی تیاریاں

  

جنیوا(نیوز ڈیسک) بڑی بڑی ٹیکنالوجی کمپنیاں خودکا ر طریقے سے چلنے والی گاڑیاں تیار کرنے کی کوشش میں مصروف ہیں لیکن یورپی سائنسدانوں نے ایک ایسا ہیلی کاپٹر تیار کرنے کا منصوبہ بنا لیا ہے کہ جو ایک مسافر کے لئے استعمال ہوگا اور ٹیک آف سے لے کر لینڈ کرنے تک تقریباً سارے کام خود ہی سنبھالے گا۔ ’مائی کاپٹر ‘نامی اس جدید ترین ہیلی کاپٹر کو صرف یہ بتانا پڑے گا کہ آپ کہاں جانا چاہ رہے ہیں اور پھر یہ خود ہی راستے کا تعین کرے گا ،انجن سٹارٹ کرنے سے لے کر اڑان بھرنے ، رفتار، بلندی لینڈنگ کی جگہ اور محفوظ طریقے سے نیچے اترنے کے کام یہ خود ہی کرے گا۔فضائی ٹریفک سے بچنے کےلئے یہ ہیلی کاپٹر 2000فٹ سے کم بلندی پر پرواز کرے گا۔ اور اس کے جدید خود کار نظام کی وجہ سے اسے ائیر ٹریفک کنٹرول جیسی سہولیات کی بھی ضرورت ہوگی ۔یورپی سائنسدانوں نے توقع ظاہرکی ہے کہ یہ چھوٹا ہیلی کاپٹر اس طرح ڈیزائن کیا جاسکے گا کہ اسے کوئی بھی عام شخص اڑا سکے اور یہ لوگوں کو گھروں سے کام پر جانے اور دیگر مختصر فاصلوں کو طے کرنے میں مدد دے گا۔ اس ہیلی کاپٹر کی مدد سے وقت کی بے پناہ بچت ہوگی اور سڑکوں پر ٹریفک او ر رش بھی کم ہوجائے گا۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -