سلک روٹ: چین کی طرف سے100ارب یوان دینے کا اعلان

سلک روٹ: چین کی طرف سے100ارب یوان دینے کا اعلان

اسلام آباد میں ایک پُروقار تقریب میں چینی سفیر سن وی ڈونگ اور پاکستانی مشیر برائے خارجہ امور سرتاج عزیز نے پاک چین سٹڈی سنٹر کا افتتاح کیا۔اس موقع پر چین کے سفیر نے سلک روٹ کے لئے 100ارب یوان دینے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ پاک چین دوستی کو غیر معمولی اہمیت حاصل ہے۔ چین پُرامن ہمسائیگی پر یقین رکھتا ہے، ہمارے ارادے حاکمانہ نہیں، چین اپنی ترقی کے ثمرات دُنیا بھر میں ہر جگہ پہنچانا چاہتا ہے۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے پاکستانی مشیر برائے خارجہ امور سرتاج عزیز نے کہا کہ چین،پاکستان کا انتہائی پُراعتماد، وفادار اور پُرخلوص دوست ہے جس پر پاکستان کو فخر ہے۔مشیر خارجہ امور سرتاج عزیز کی یہ بات بالکل درست ہے کہ گزشتہ سات دہائیوں میں پاکستان اور چین کے تعلقات بہت گہرے ہو چکے ہیں۔ سی پیک کی وجہ سے ہمارے باہمی تعلقات مزید مستحکم ہوئے ہیں، جس پر دونوں ممالک کو بے حد فخر ہے،کیونکہ دُنیا بھر میں ہماری دوستی کی مثال دی جاتی ہے۔چین کے سفیر نے واضح کیا ہے کہ چین ’’ترقی سب کے لئے‘‘ کے فلسفے پر یقین رکھتا ہے اور اِسی نظریے سے دُنیا بھر میں سی پیک اور ون بیلٹ ون روڈ کے تحت ترقی کو یقینی بنانے کی کوشش کر رہا ہے۔ ترقی کے اِس سفر میں پاکستان پوری طرح چین کا ہمسفر اور شریکِ کار ہے۔ یہ امر خوش آئند ہے کہ سلک روٹ کے تحت ترقیاتی منصوبوں کی تکمیل کے لئے چین نے 100ارب یوان دینے کا اعلان کیا ہے۔ اس رقم سے سلک روٹ پر زیر تکمیل منصوبوں کو تیزی سے مکمل کیا جا سکے گا۔ کچھ عرصے سے سی پیک اور سلک روڈ کے وسیع علاقوں میں سیکیورٹی کے انتظامات کو بہتر بنانے کی ضرورت محسوس کی جا رہی ہے،کیونکہ حالیہ چند مہینوں میں دہشت گردی کے کئی واقعات ہو چکے ہیں، چینی انجینئروں کے اغوا کے ساتھ ساتھ پاکستانی مزدوروں کو بھی فائرنگ کر کے موت کے گھاٹ اتارنے کے واقعات کی روک تھام کے لئے ضروری ہے کہ حفاظتی انتظامات کو بہتر بنایا جائے۔سی پیک کے منصوبہ کے لئے پاکستان کے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے پاک آرمی کے خصوصی دستے کو تعینات کر رکھا ہے۔ تاہم بعض مقامات پر اچانک حملہ کر کے دہشت گرد فرار ہوتے رہے ہیں۔ چین کی طرف سے 100ارب یوان مہیا کر کے سیکیورٹی کے انتظامات کو بہتر بنانے کا موقع فراہم کیا گیا ہے،جبکہ مجموعی طور پر سلک روٹ کے منصوبوں کی جلد تکمیل بھی ممکن ہو سکے گی۔ سی پیک اور ون بیلٹ ون روڈ کے منصوبوں کے ذریعے ہونے والی ترقی اس خطے میں شاندار اور عظیم مواقع یقینی بنائے گی۔ پاکستان اور چین کی مشترکہ کاوشیں یقیناًدوستی اور باہمی جدوجہد کو یاد گار بنائیں گی۔

مزید : اداریہ


loading...