”نیوز لیکس کا ملبہ بلاجواز مجھ پر ڈالا گیا “،وزیر اعظم کے سابق پرنسپل انفارمیشن آفیسر راﺅ تحسین نے برطرفی چیلنج کر دی

”نیوز لیکس کا ملبہ بلاجواز مجھ پر ڈالا گیا “،وزیر اعظم کے سابق پرنسپل ...
”نیوز لیکس کا ملبہ بلاجواز مجھ پر ڈالا گیا “،وزیر اعظم کے سابق پرنسپل انفارمیشن آفیسر راﺅ تحسین نے برطرفی چیلنج کر دی

  


اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن ) نیوز لیکس معاملے میں عہدے سے ہٹائے جانے والے وزیراعظم کے پرنسپل انفارمیشن آفیسرراﺅ تحسین نے اپنی برطرفی اور انضباطی کارروائی کو چیلنج کر دیا ۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق وزیر اعظم نوازشریف کے سابق پرنسپل انفارمیشن آفیسر راﺅ تحسین نے نیوز لیکس معاملے میں اپنی برطرفی اور انضباطی کارروائی کو اسلام آباد ہائی کورٹ میں چیلنج کردیا ۔

راﺅ تحسین کی جانب سے درخواست میں موقف اپنایا گیا ہے کہ نیوز لیکس کا ملبہ بلا جواز مجھ پر ڈالا گیا اور انکوائری کمیشن کی رپورٹ دکھائے بغیر میرے خلاف انضباطی کارروائی کا آغاز کیا گیا ۔

انہوں نے اپنی درخواست میں وزارت اطلاعات ،وزارت داخلہ اور وزیراعظم کے سیکرٹری کو فریق بناتے ہوئے کہا ہے کہ 29اپریل کو عہدے سے ہٹا کر اسٹیبلشمنٹ ڈویژن رپورٹ کرنے کا کہا گیا۔

راﺅ تحسین نے درخواست میں کہا ہے کہ انکورئری کمیٹی کی رپورٹ حاصل کرنا میرا حق ہے تاہم عدالت رپورٹ فراہم کرنے کا حکم دے۔

یاد رہے نیوز لیکس معاملے پر حکومت کی جانب سے وزیرا عظم کے مشیر برائے امور خارجہ طارق فاطمی اور سابق وزیر اطلاعات پرویز رشید کو بھی ذمہ دار قرار دیتے ہوئے عہدوں سے برطرف کیا گیا تھا ۔

مزید : قومی


loading...