بھارتی ریاستوں میں طوفانی بارشوں اور سیلاب نے تباہی مچا دی ،9 افراد ہلاک ،12ہزار سے زائد افراد بے گھر ہو گئے

بھارتی ریاستوں میں طوفانی بارشوں اور سیلاب نے تباہی مچا دی ،9 افراد ہلاک ...
بھارتی ریاستوں میں طوفانی بارشوں اور سیلاب نے تباہی مچا دی ،9 افراد ہلاک ،12ہزار سے زائد افراد بے گھر ہو گئے

  


اگرتلا(ڈیلی پاکستان آن لائن)بھارتی ریاست  تریپورہ اور جنوبی بنگال میں گزشتہ 24 گھنٹوں سے جاری تیز بارشوں اور سیلاب نے تباہی مچا دی ، خاتون سمیت 9 افراد ہلاک جبکہ  ندی نالوں میں آنے والی خوفناک  طغیانی اور سیلاب سے 12 ہزار سے زائد افراد بے گھر ہو گئے ہیں ، ان دونوں ریاستوں کے شہری  اور دیہی علاقوں میں ہونے والی  شدید بارشوں نے نشیبی علاقوں میں سیلاب جیسے حالات پیدا کر دیئے ہیں جس سے تریپورہ  میں  قومی شاہراہ اور دیگر راستوں پر ٹریفک جام ہو گئی ہے اور سڑکوں ندی نالیوں کا منظر پیش کر رہی ہیں ۔

بھارتی نجی ٹی وی چینل’’انڈیا ٹی وی ‘‘ کے مطابق بھارتی ریاستوں  جنوبی بنگال اور  تریپورہ میں گذشتہ 24 گھنٹوں سے جاری طوفانی بارشوں نے دونوں ریا ستوں نے تباہی مچا دی ہے جبکہ تریپورہ کے دارلخلافہ  اگرتلا کے 2500 لوگوں سمیت مختلف حصوں میں 12 ہزار سے زائد افراد بے گھر ہو گئے ہیںاور  ریاست کی زیادہ تر ندیاں خطرے کے نشان سے اوپر بہہ رہی ہیں، شہری علاقوں میں ہوئی شدید بارش نے نشیبی علاقوں میں سیلاب جیسے حالات پیدا کر دیئے ہیں جبکہ جنوبی بنگال کے سرکاری حکام کے مطابق  کل شام سے بارش سے ہونے والے مختلف حادثوں میں کم از کم آٹھ افرادہلاک ہو گئے ہیں جبکہ تریپورہ میں بھی ایک خاتون سمیت کئی افراد کے ہلاک ہونے کی اطلاعات ہیں ۔تریپورہ ضلع انتظامیہ نے نیشنل ڈیزاسٹر رسپانس فورس (این ڈی آر ایف) اور سول ڈیفنس کی ٹیموں کو امدادی  کاموں میں لگا دیا ہے۔ ریاست میں کھووائی، کمال پور، کمار گھاٹ، کیلاشاہر، دھرم نگر اور بشال گڑھ کی ندیاں خطرے کے نشان سے کافی اوپر بہہ رہی ہیں جس کی وجہ دریاؤں کے نچلے علاقوں میں رہنے والے لوگوں کو کل شام ہی وہاں سے ہٹا دیا گیا تھا لیکن پہاڑی علاقوں میں زوردار بارش کا پانی نشیبی علاقوں میں آنے سے صورت حال اور بھیانک ہو گئی ہے۔ محکمہ موسمیات نے ریاست میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 200 ملی میٹر بارش ریکارڈ کی ہے اور اگلے 48 گھنٹوں میں تیز ہواؤں کے ساتھ طوفانی بارشوں  کا امکان ظاہر کیا ہے۔واضح رہے کہ جنوبی بنگال میں گذشتہ کچھ عرصہ سے قیامت خیز گرمی پڑ رہی تھی ،بارش ہوئی تو لوگوں نے سکھ کا سانس لیا لیکن جنوبی بنگال کے لوگوں کو بارش بھی راس نہیں آئی اور گذشتہ روز سے جاری ہونے والی طوفانی بارشوں نے لوگوں پر ایک اور قیامت ڈھا دی ہے ۔دوسری طرف تریپورہ  کے ریاستی وزیر اعلیٰ مانک سرکار نے کہا ہے کہ  بحران کی اس گھڑی میں ریاستی حکومت کے پاس امدادی کارروائیوں اور پیسے کی کوئی کمی نہیں ہے ،امدادی ادارے پوری طرح متحرک رہتے ہوئے مصیبت میں مبتلا افراد کی امداد کے لئے 24 گھنٹے مصروف عمل ہیں ۔

مزید : بین الاقوامی


loading...