ہائیکورٹ نے وزیر اعظم کے وزیروں ، مشیروں اور معاونین خصوصی کی تعداد اور مراعات کی تفصیلات طلب کر لیں

ہائیکورٹ نے وزیر اعظم کے وزیروں ، مشیروں اور معاونین خصوصی کی تعداد اور ...
ہائیکورٹ نے وزیر اعظم کے وزیروں ، مشیروں اور معاونین خصوصی کی تعداد اور مراعات کی تفصیلات طلب کر لیں

  


لاہور ( نامہ نگار خصوصی) لاہورہائیکورٹ نے وزیر اعظم کے مشیروں، وزیروں اور معاونین خصوصی کی تعداد، تنخواہوں اور دیگرمراعات پر تفصیلی رپورٹ طلب کر لی ۔

سابق پی سی او جج سجاد حسین شاہ پنشن کیس، سرکاری وکیل کو ایوان صدر سے ہدایات لے کر پیش ہونے کا حکم

چیف جسٹس سید منصور علی شاہ نے محمود اختر نقوی کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ مشیر خارجہ سرتاج عزیز کو وزیر خارجہ کے اختیار نہیں دیئے جا سکتے، وزارت خارجہ کے معاون خصوصی طارق فاطمی بھی وزیر خارجہ کا کردار ادا کر رہے ہیں جبکہ مشیر ہوابازی مہتاب عباسی اپنے اختیارات کا ناجائز استعمال کر رہے ہیں، حکومت نے مشیروں اور معاونین خصوصی سے متعلق رپورٹ جمع کرائی کہ ان کی تعداد پانچ ہے جبکہ یہ تعداد سات ہے جس کی دستاویزات درخواست کے ساتھ لف کر دی گئی ہیں، وفاقی حکومت کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ وزیر اعظم کے مشیروں کو وفاقی وزرا کے اختیارات نہیں دیئے تاہم وفاقی حکومت کی طرف سے ان درخواستوں میں جواب جمع نہیں کرایا گیا جس پر عدالت نے سرکاری وکیل کو ہدایت کی کہ ان درخواستوں میں آئندہ سماعت تک تفصیلی جواب جمع کرایا جبکہ وزیروں، مشیروں، معاونین خصوصی کی اصل تعداد، تنخواہوں اور مراعات پر مبنی رپورٹ بھی جمع کرائی جائے۔ اس کیس کی مزید دس اگست کو ہو گی۔

مزید : لاہور


loading...