اسرائیلی ایٹمی وارہیڈز پر گفتگو کی ضرورت ہے : جواد ظریف

اسرائیلی ایٹمی وارہیڈز پر گفتگو کی ضرورت ہے : جواد ظریف

تہران (صباح نیوز)ایران کے وزیرخارجہ نے اپنے ایک ٹویٹ میں مشرق وسطی میں 80ایٹمی وارہیڈز کی جانب اشارہ کرتے کہا اس میں سے ایک بھی ایران میں نہیں ۔غیرملکی میڈیا کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیرخارجہ محمد جواد ظریف نے کہا ہے ایٹمی وارہیڈز جنگ پسندوں کے پاس ہیں اور وہ جھوٹے اور من گھڑت دعو وں کے ذریعے ایران پر الزامات عائد کرتے رہتے ہیں۔ علاقے اور دنیا کولاحق حقیقی خطرات کے بارے میں مدتوں قبل سے تاخیر کا شکار گفتگو شروع ہونی چاہیے ۔واضح رہے قدس کی غاصب اور جابر صیہونی حکومت در پردہ اور امریکہ کی حمایت کی وجہ سے این پی ٹی میں شامل نہیں ہوا ہے اور اس کے پاس 200 کے قریب ایٹمی وارھیڈز موجود ہیں۔

جواد ظریف

مزید : علاقائی


loading...