مجھے پکڑنے سے پیپلزپارٹی کوکوئی فرق نہیں پڑتا،مقتدر قوتوں کو چاہئے حساب کتاب بند اور آگے کی بات کی جائے،آصف زرداری

مجھے پکڑنے سے پیپلزپارٹی کوکوئی فرق نہیں پڑتا،مقتدر قوتوں کو چاہئے حساب ...
مجھے پکڑنے سے پیپلزپارٹی کوکوئی فرق نہیں پڑتا،مقتدر قوتوں کو چاہئے حساب کتاب بند اور آگے کی بات کی جائے،آصف زرداری

  


اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سابق صدر آصف زرداری نے کہا ہے کہ اس میں کوئی صداقت نہیں کہ بجٹ محکمہ فنانس میں بنایا گیا،اتنا اچھا بجٹ ہے تو کیوں لوگ رو رہے ہیں، ہر صنعت کی جانب سے اشتہار آرہے ہیں ہمیں بچاؤ،انہوں نے کہا کہ صنعتکارکو بہت خوف ہے، عام لوگ خوفزدہ ہیں کہ زرداری پکڑے جاسکتے ہیں توہمارا کیا بنے گا،سابق صدر نے کہاکہ مجھے پکڑنے سے پیپلزپارٹی کوکوئی فرق نہیں پڑتا، جو طاقتیں انہیں لے کر آئی ہیں انہیں بھی سوچنا چاہئے،حساب کتاب بندکیاجائے آگے کی بات کی جائے ،ایسا نہ ہوکل عوام اور پورا ملک کھڑا ہوجائے پھر کوئی پارٹی سنبھال سکے گی نہ ہم۔

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی بجٹ اجلاس میں اظہار خیال کرتے ہوئے سابق صدر آصف زرداری نے کہا کہ اسمبلی میں آکرپرانی یادیں تازہ ہوگئیں،جیلیں ہمارے لیے کوئی نئی بات نہیں،پروڈکشن آرڈرجاری کرنے پرسپیکر اسمبلی کا شکر گزار ہوں ،آصف زرداری نے کہا کہ اس میں کوئی صداقت نہیں کہ بجٹ محکمہ فنانس میں بنایا گیا،پاکستان زرعی ملک ہے ،کاٹن اور فائبر برآمد کرتا ہے ، تین چار ترجیحی موضوعات پر حکومت اور اپوزیشن بیٹھ کر معاشی پالیسی پر بات کرلیں ،آج ہم ہیں کل کوئی اور ہوگا،جمہوریت میں یہ سلسلہ چلتا رہے گا،پاکستان ہے تو ہم سب ہیں ،پاکستان نہیں تو کوئی کچھ نہیں،آصف زرداری نے کہا کہ پیپلز پارٹی نے جانوں کا نذرانہ دیا ہے ،بی بی کی شہادت کے بعد سندھ میں نعرہ لگا پاکستان نہ کھپے میں نے کہاپاکستان چاہیے۔

سابق صدر نے کہا کہ ہر صنعت کی جانب سے اشتہار آرہے ہیں ہمیں بچاؤ،اتنا اچھا بجٹ ہے تو کیوں لوگ رو رہے ہیں ،انہوں نے کہا کہ 5لاکھ کے چیک پربھی ایف بی آرنوٹس بھیج دیتاہے،ملک میں کون کون حساب دےگا،صنعت کارکو بہت خوف ہے،مجھے پکڑنے سے پیپلزپارٹی کوکوئی فرق نہیں پڑتا،عام لوگ خوفزدہ ہیں کہ زرداری پکڑے جاسکتے ہیں توہمارا کیا بنے گا،آصف زرداری نے کہا کہ سرکاری ملازمین کی تنخواہیں بڑھائیں تو ٹیکس بھی بڑھا دیا،انہوں نے کہا کہ جو طاقتیں انہیں لے کر آئی ہیں انہیں بھی سوچنا چاہیے،حساب کتاب بندکیاجائے آگے کی بات کی جائے ،ایسا نہ ہوکل عوام اور پورا ملک کھڑا ہوجائے پھر کوئی پارٹی سنبھال سکے گی نہ ہم،ایسا نہ ہوکہ سیاسی طاقتوں سے بھی یہ گیند نکل جائے۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /اسلام آباد