طبی بنیادوں پر درخواست ضمانت منسوخی، مریم نواز بھی میدان میں آ گئیں

طبی بنیادوں پر درخواست ضمانت منسوخی، مریم نواز بھی میدان میں آ گئیں
طبی بنیادوں پر درخواست ضمانت منسوخی، مریم نواز بھی میدان میں آ گئیں

  


اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) اسلام آباد ہائیکورٹ کی جانب سے سابق وزیراعظم نواز شریف کی طبی بنیادوں پر ضمانت کی درخواست منسوخ ہونے پر مریم نواز شریف نے بھی ردعمل دیدیا ہے۔

سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری اپنے پیغام میں انہوں نے کہا ”جس شخص نے اس ملک میں عوام کی حاکمیت کی بات کی اور آئین و قانون کی حکمرانی کیلئے ڈٹ گیا، اس شخص پر انصاف کے تمام دروازے بند کر دئیے گئے۔ مگر یاد رہے! ظلم جب حد سے بڑھتا ہے تو مٹ جاتا ہے، کفر کا نظام تو چل سکتا ہے، ظلم کا نہیں،میں اس ظلم کے خلاف آواز اٹھاؤں گی، لڑوں گی اور آخری حد تک جاؤں گی۔

مریم نواز نے اپنے ایک دوسرے ٹویٹ میں کہا کہ’’میں اس ظلم کے خلاف آواز اٹھاؤں گی، لڑوں گی، آخری حد تک جاؤں گی،عوام کے حقیقی نمائندے نواز شریف کو انشاءاللہ انصاف دلوا کر رہوں گی، جیل میں ڈالنا ہے تو ڈال دو، قید کرنا ہےتو کر دو،ان چیزوں سے تم ڈرتے ہو، میں نہیں،بہت جلد عوام کے سامنے آ جائے گا کہ نواز شریف کے ساتھ کیا کھیلا گیا؟۔انہوں نے کہا کہ نوازشریف ہی نہیں ضمیر کے کتنے قیدی کال کوٹھڑیوں میں ہیں؟جمہوری قدریں,حق کی آوازیں میڈیا کی آزادی,بے لاگ انصاف,قانون کی حکمرانی اور اظہار رائےکا حق سب کچھ جیل کی سلاخوں کے پیچھے ہے،نوازشریف کی بیٹی ہوتے ہوئےمیں صرف اپنے باپ کیلیے نہیں,زنجیروں میں جکڑے ان سب قیدیوں کیلیے لڑونگی۔

واضح سابق وزیراعظم نوازشریف کی طبی بنیادوں پر درخواست ضمانت پر اسلام آباد ہائیکورٹ نے فیصلہ محفوظ فیصلہ سناتے ہوئے درخواست مسترد کر دی ہے۔ عدالت نے قراردیا کہ نوازشریف کو العزیزیہ ریفرنس میں طبی بنیادوں پر ضمانت نہیں مل سکتی اور نیب کی درخواست مسترد کرتے ہوئے رہا نہ کرنے کی استدعا منظور کر لی۔

مزید : قومی