حیدر آباد ، جناح ایکسپریس کی مال گاڑی کو ٹکر ، 3 افراد جاں بحق، ابتدائی رپورٹ میں مسافر ٹرین کا ڈرائیور ، اسسٹنٹ ڈرائیور ذمہ دار قرار

حیدر آباد ، جناح ایکسپریس کی مال گاڑی کو ٹکر ، 3 افراد جاں بحق، ابتدائی رپورٹ ...
حیدر آباد ، جناح ایکسپریس کی مال گاڑی کو ٹکر ، 3 افراد جاں بحق، ابتدائی رپورٹ میں مسافر ٹرین کا ڈرائیور ، اسسٹنٹ ڈرائیور ذمہ دار قرار

  


حیدر آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) پٹھان گوٹھ کے قریب مال بردار اور مسافر ٹرین کے تصادم کے نتیجے میں 3افراد جاں بحق اور متعدد زخمی ہوگئے۔ واقعے کی ابتدائی رپورٹ میں جناح ایکسپریس کے ڈرائیور اور اسسٹنٹ ڈرائیور کو حادثے کا ذمہ دار قرار دیا گیا ہے۔

حیدر آباد میں پٹھان گوٹھ کے قریب مال بردار ٹرین سگنل بند ہونے کے باعث کھڑی تھی کہ پیچھے سے آنے والے تیز رفتار جناح ایکسپریس نے اسے ٹکر مار دی۔ ٹرینوں کے تصادم میں دونوں گاڑیوں کے انجن تباہ ہوگئے اور کئی بوگیاں پٹری سے اتر گئیں۔

ریسکیو حکام کے مطابق حادثے میں تین افراد جاں بحق ہوئے، وزیر ریلوے شیخ رشید نے بھی تین ہلاکتوں کی تصدیق کی اور کہا کہ مسافر ٹرین کا ڈرائیور، اسسٹنٹ ڈرائیور اور ایک گارڈ اس حادثے میں جان کی بازی ہارے ہیں۔

ریلوے حکام کا کہنا ہے کہ مال گاڑی لطیف آباد نمبر پونے ساتھ کے اپ ٹریک پر کھڑی تھی اور کلیئرنس کا سگنل ملنے کے بعد روانہ ہونے ہی والی تھی کہ کراچی سے آنے والی تیز رفتار جناح ایکسپریس نے اسے ٹکر مار دی۔ حادثے میں جناح ایکسپریس کی بوگیوں کو کوئی نقصان نہیں ہوا اور اسے کچھ گھنٹے بعد انجن لگا کر واپس کوٹری بھجوادیا گیا۔

چیف ایگزیکٹو آفیسر ریلوے آفتاب اکبر نے نجی ٹی وی جیو نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ابتدائی تحقیقات میں یہ حادثہ انسانی غفلت کا نتیجہ لگتا ہے۔ مسافر ٹرین کے انجن میں ڈرائیور اور اسسٹنٹ ڈرائیور کے ساتھ 2 غیر متعلقہ افراد بھی بیٹھے ہوئے تھے، لگتا ہے کہ چاروں افراد باتوں میں مصروف تھے جس کے باعث ڈرائیور سگنل نہیں دیکھ پایا اور بریک بھی نہیں لگا پایا۔

وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے حادثے کی اطلاع اور رابطے میں تاخیر پر لاہور بورڈ آفس میں میٹنگ طلب کر لی ہے۔ انہوں برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ عید کی چھٹیوں میں مسافروں کے رش کو بھی ریلوے سنبھال نہیں سکا، زائد کوچز لگا کر ریلوے آمدن میں اضافے کا موقع گنوا دیا گیا۔

چیئرمین ریلوے سلطان سکندر راجہ کو حادثے کی ابتدائی رپورٹ پیش کردی گئی ہے جس میں حادثے کا ذمہ دار جناح ایکسپریس کے ڈرائیور اور اسسٹنٹ ڈرائیور کو ذمہ دار قرار دیا ہے۔ چیئرمین ریلویز نے فیڈرل گورنمنٹ انسپکٹرآف ریلویز کو تحقیقات کا حکم دیا ہے جبکہ وفاقی وزیر ریولے شیخ رشید احمد نے چیف ایگزیکٹو آفیسر پاکستان ریلویز کو تحقیقات سونپ دی ہیں۔ وزیر ریلوے کا کہنا ہے کہ 24 گھنٹوں میں حادثے کی رپورٹ تیار کرلی جائے گی۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی /Breaking News /اہم خبریں /قومی /حیدرآباد