سندھ حکومت کا صنعتکاروں کے مسائل حل کے لئے کمیٹی تشکیل دینے کا فیصلہ

سندھ حکومت کا صنعتکاروں کے مسائل حل کے لئے کمیٹی تشکیل دینے کا فیصلہ
سندھ حکومت کا صنعتکاروں کے مسائل حل کے لئے کمیٹی تشکیل دینے کا فیصلہ

  


کراچی(صباح نیوز)چیف سیکریٹری سندھ سید ممتاز علی شاہ نے کہا کہ کراچی نادرن بائے پاس پر 300 ایکڑ اراضی پر ماربل انڈسٹری بنائے جائے گی۔ چیف سیکریٹری سندھ سید ممتاز علی شاہ نے سرمایہ کاروں اور صنعتکاروں پر زور دیا کے حکومت سندھ کے لئے صنعتکار اور سرمایہ کار آگے بڑھیں اور معیشت کے استحکام کے لئے اپنا کردار ادا کریں۔

یہ بات انہوں نے اپنے دفتر میں فیڈریشن آف پاکستان چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریز، حیدرآباد اور لاڑکانہ چیمبر آف کامرس کے نمائندوں سے ملاقات کے دوران کی۔ ملاقات میں چیئرمین ایس آر بی خالد محمود، کمشنر کراچی افتخار شا لوانی، سیکریٹری داخلہ عبدالکبیر قاضی، سیکریٹری بلدیات خالد حیدر شاہ، سیکریٹری انڈسٹریز عبدالحلیم شیخ، ایڈیشنل آئی جی کراچی منیر احمد شیخ، سیکریٹری لیبر عبدالرشید سولنگی سمیت دیگر افسران نے شرکت کی۔ چیف سیکریٹری سندھ نے کہا کہ حکومت سندھ نے صوبے کے صنعتی علاقوں میں سڑکوں اور دیگر انفرااسٹرکچر کو بہتر کیا گیا ہے جس سے نئی صنعتکاروں کو فائدہ اٹھانا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ سندھ کے دیگر علاقوں حیدرآباد، دادو، لاڑکانہ اور خیرپور میں نئی صنعتی اصلاحات لائے جارہے ہیں۔انہوں نے ایف پی سی سی آئی کے نمائندوں سے کہا کہ وہ خیرپور اکنامک زون کا دورہ کریں اور دیکھیں سندھ حکومت نے خیرپور اکنامک زون میں صنعتکاروں کے لئے بہترین ماحول فراہم کیا ہے۔

اجلاس میں فیڈریشن آف پاکستان چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری اور دیگر چیمبر کے نمائندوں نے صنعتکاروں اور تاجروں کو در پیش مسائل کے حوالے سے  چیف سیکریٹری سندھ کو آگاہ کیا۔ چیف سیکریٹری سندھ نے صنعتکاروں کے مسائل کے حل کہ لئے کمیٹی تشکیل دینے کے لئے سیکریٹری لیبر کو ہدایات جاری کی۔ چیف سیکریٹری سندھ نے کہا کہ کراچی کے لئے وفاقی حکومت اور سندھ حکومت کے ساتھ ساتھ 200 بلین کے ورلڈ بینک اور ایشیائی ترقیاتی بینک کے منصوبے ہیں۔ اجلاس میں سیکریٹری انویسٹمنٹ نے بتایا کہ سندھ حکومت نے اینگرو سے متعلق صنعت لگانے والوں کے لئے بہترین مواقع دیئے ہیں اور ایسی صنعتوں کے لئے 10 سال کے لئے ٹیکس ہالیڈی دیا گیا ہے۔ انہوں نے بتایا کے نادرن بائی پاس کراچی میں 300 ایکڑ زمین ماربل انڈسٹری کے لئے رکھی گئی ہے۔ چیف سیکریٹری سندھ نے تمام صنعتکاروں ہر واضح کیا کہ وہ حکومت کے تمام قوانین پر عملدرآمد کریں اور ٹیکس وقت پر دیں اس سے ان صنعتکاروں کو فائدہ ہوگا۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی