قومی ایکشن پلان پر عملدرآمد حکومت کی اولین ترجیح،وزیر داخلہ

          قومی ایکشن پلان پر عملدرآمد حکومت کی اولین ترجیح،وزیر داخلہ

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) وفاقی وزیر داخلہ بریگیڈیئر ریٹائر اعجاز احمد شاہ نے کہا ہے کہ قومی ایکشن پلان پر عملدرآمد حکومت کی اولین ترجیح ہے،حکومت ملک کو اس ڈگر پر واپس جانے سے روکنے کے لئے تمام ممکنہ اقدامات کرے گی، کورونا وائرس کی آڑ میں دہشت گردانہ سرگرمیوں کو ہوا دی جاسکتی ہے اس حوالے سے پیشگی جوابی اقدامات کرنے کی ضرورت ہے، دہشت گردی کے منصوبہ سازوں کیخلاف جنگ ابھی جاری ہے اس کیلئے قومی یکجہتی اور مشترکہ حکمت عملی اپنانا ہو گی،سی پیک سے متعلق منصوبوں کی سکیورٹی کو یقینی بنانے کے لئے اقدامات کیے گئے ہیں،بھارت، گلگت بلتستان اور بلوچستان میں امن وامان کی صورتحال کو خراب کرکے منصوبوں کو سبوتاژ کرنے کے مذموم عزائم رکھتا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعہ کو نیشنل ڈیفنس یونیورسٹی اسلام آباد کے دورے کے موقع پر ملک کی داخلی سلامتی کے حوالے سے معاملات پر کمانڈ اینڈ لیڈر شپ پروگرام 2020 کے شرکاء سے خطاب میں کیا۔ تقریب کورس کے دوران بحث مباحثے اور بریفنگز کے سلسلے کا حصہ تھی۔لیکچر میں ڈائریکٹر جنرل آئی ایس ایس آر اے، این ڈی یو، فیکلٹی ممبران اور کمانڈ اینڈ لیڈرشپ پروگرام کے شرکاء نے شرکت کی۔موجودہ علاقائی صورتحال کے حوالے سے وزیرداخلہ نے کہا کہ بھارت کی کشمیر پر ہٹ دھرمی سے وہ دنیا میں تنہا ہو کر رہ گیا ہے اور اب ان کے پالیسی ساز غلط اور فلیگ آپریشن کی طرف دیکھ رہے ہیں تاکہ ملکی و عالمی سطح پر توجہ ہٹا سکیں اور معاشرے میں پیدا ہونیوالے بگاڑ کو چھپا سکیں۔ حکومت کشمیری بھائیوں کیساتھ اس مشکل وقت میں شانہ بشانہ کھڑی ہے، ہم چاہتے ہیں کہ مسئلہ کشمیر کشمیری عوام کی خواہشات اور اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل ہو۔ہم کشمیریوں کا بھرپور ساتھ دینے کے لئے تیار ہیں۔

اعجاز شاہ

مزید :

صفحہ اول -