انویسٹرز کے بغیر فلم ریلیز کرنا بڑامسئلہ،شوبز شخصیات

  انویسٹرز کے بغیر فلم ریلیز کرنا بڑامسئلہ،شوبز شخصیات

  

لاہور(فلم رپورٹر)شوبز کے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والی شخصیات کا کہنا ہے کہ سنیماؤں میں فلم ریلیزکرنے کے لئے ڈسٹری بیوٹرزنئے فلمسازوں سے لاکھوں روپے کی ڈیمانڈکرتے ہیں،شوبز شخصیات نے کہا کہ نئے پروڈیوسرزپہلے ہی بڑی مشکل سے اچھی فلم بنانے کی کوشش کرتے ہیں،اور موجودہ دورمیں انڈسڑی کی بحالی کے لئے اپنا سرمایہ لگاتے ہیں لیکن ڈسٹری بیوٹرزکی طرف سے لاکھوں روپے کی ڈیمانڈکا سن کران کو بہت مایوسی ہوتی ہے پاکستان فلم انڈسٹری سے وابستہ شخصیات نے اپنے مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ ایک توہم فلم پر پیسہ لگائیں دوسرا ان ڈسٹری بیوٹرزکی لاکھوں روپے کی ڈیمانڈزپوری کریں یہ ناممکن ہے،سینئر اداکار اچھی خان و دیگرنے کہا کہ اس وقت فلم ریلیزکرنا ہی سب سے بڑامسئلہ ہے،مارکیٹ میں انویسٹرہی نہیں ہیں، کہا کہ ہم کراچی کی طرح بڑی کاسٹ اور بڑے بجٹ کے ساتھ فلم نہیں بنا سکتے،توکیا ہم فلمیں بنانا بندکردیں،فلم کوجب ریلیزکرنے کے لئے ڈسٹری بیوٹرزکے پاس لایا جاتا ہے توہم سے ڈسٹری بیوٹرزلاکھوں روپے کی ڈیمانڈ کرتے ہیں،ہمیں اس بات کی سمجھ نہیں آتی کہ ہم سے کیوں ناروا سلوک کیا جاتا ہے۔

،ہمارا چیئرمین میاں عبدالرشیدسے مطالبہ ہے کہ ہمارے تحفظات کو یقینی بنایا جائے،اور اس بات کا کوئی حل نکالا جائے۔

مزید :

کلچر -