ملک میں فرقہ واریت منظم عالمی سازش ہے،علامہ محمد شعیب

ملک میں فرقہ واریت منظم عالمی سازش ہے،علامہ محمد شعیب

  

پشاور(سٹی رپورٹر)تمام مکاتب فکر کے جید علما کرام نے فرقہ واریت کو عامیسازش تسلیم کرتے ھوئے اس کے خلاف اسلام آباد میں اقوام متحدہ کے آفس کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کرنے اور ایک پٹیشن جمع کرانے پر اتفاق کر لیا ھے،پٹیشن میں اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا جائیگا کہ وہ امریکہ برطانیہ، اسرائیل اور بھارت، کو پاکستان سمیت مسلم دنیا میں دھشت گردی، فرقہ واریت پیدا کرنے اور مسلمان فرقوں میں مداخلت سے روکے، برطانیہ میں ایم آئی سکس کی فنڈنگ سے فرقہ وارانہ نفرتیں پھیلانے والے دو ٹی وی چینل فورا" بند کیئے جائیں اور مذھب کی بنیاد پر مسلمانوں کے خلاف سازشیں بند کروائی جائیں، تمام۔دینی و مذبھی سیاسی پارٹیوں کے صوبائی قائدین اپنی اپنی مرکزی قیادتوں کو اسلام آباد یو این آفس کے سامنے مظاہرے پر آمادہ کریں گے اور انکو اعتماد میں لینگییہ اھم فیصلے جمعرات کے روز عالمی متحدہ علما و مشائخ کونسل کے صوبائی اجلاس میں کیئے گیئے جو امامیہ مسجد گنج پشاور میں علامہ محمد شعیب کی زیر صدارت منعقد ھوا، اجلاس میں جمعیت علمااسلام، جماعت اسلامی، جمعیت اھلحدیث، مجلس وحدت مسلمین، اور شیعہ علما کونسل کے صوبائی عہدیداروں سمیت ہر مکتبہ فکر کے جید علما کرام اور اکابرین نے کثیر تعداد میں شرکت کی، اجلاس سے جے یو ائی کے مولانا اقبال شاہ حیدری، مولانا حسین احمد مدنی، جماعت اسلامی کے ڈیٹی سیکرٹری جنرل مولانا حنیف اللہ،جمعیت اھلحدیث کے شیخ الحدیث مولانا محمد اللہ، مردان سیعلامہ شبیر الحسن،عالمی متحدہ علما و مشائخ کونسل کے سرپرست اعلی معروف عالم دین مولانا محمد یونس بلبل مدینہ، چیئر مین علامہ محمد شعیب،مدرسہ عارف الحسینی کیعلامہ عابد حسین شاکری،مجلس وحدت مسلمین کے ڈیٹی سیکرٹری جنرل علامہ جہانزیب،سید اظھر علی شاہ اور دیگر مقررین نے خطاب کیا،اجلاس میں سوشل میڈیا میں شرپسندوں کی طرف سے فرقہ واریت پھیلانے کی سازشوں کا سختی سے نوٹس لیتے ھوئے اس پر مکمل پاپندی کے لیئے ھائی کورٹ سے رجوع کرنے پر اتفاق کیا گیا،ان معاملات کو آگے بڑھانے کے لیئے کمیٹی بھی تشکیل دی گئی جبکہ وفاقی کابینہ میں شامل قادیانیوں کے حامی وزراکی پرزور مذمت کی گئی اور ان کے مستعفی ھونے کا مطالبہ کیا گیا،اجلاس میں دینی مدارس کے معاملات میں بے جا حکومتی مداخلت کی پرزور مذمت کی گئی اور نیب کے زریعے مدارس کو فنڈنگ کے منصوبے کو گہری سازش قرار دیتے ھوئے اس منصوبے کو یکسر مسترد کردیا گیا،اجلاس میں رد قادیانیت،رد فرقہ واریت، اور ختم نبوت کے لیئے مشترکہ تحریک بھی چلانے پر اتفاق کیا گیا،

مزید :

پشاورصفحہ آخر -