مفتی نعیم کی انتقال سے کچھ دیر پہلے نجی ٹی وی سے کی گئی گفتگو سامنے آگئی، اس دوران ان کی طبیعت کیسی تھی؟

مفتی نعیم کی انتقال سے کچھ دیر پہلے نجی ٹی وی سے کی گئی گفتگو سامنے آگئی، اس ...
مفتی نعیم کی انتقال سے کچھ دیر پہلے نجی ٹی وی سے کی گئی گفتگو سامنے آگئی، اس دوران ان کی طبیعت کیسی تھی؟

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) ممتاز عالم دین اور جامعہ بنوریہ العالمیہ کے شیخ الحدیث مفتی نعیم دل کے عارضے کے باعث انتقال کرگئے ہیں، انہوں نے اپنے انتقال سے  کچھ دیر پہلے نجی ٹی وی سے سورج گرہن کے حوالے سے گفتگو کی تھی، اس دوران  وہ طبیعت کی خرابی کے باعث مسلسل کھانستے رہے اور رک رک کر گفتگو کرتے رہے۔

اپنے انتقال سے کچھ دیر پہلے مفتی نعیم نے نجی ٹی وی 24 نیوز سے  گفتگو کے دوران اتوار کو پاکستان میں لگنے والے سورج گرہن کے حوالے سے گفتگو کی تھی۔ انہوں نے کہا کہ نبی اکرم ﷺ کی واضح حدیث ہے کہ سورج اور چاند گرہن ہوتے ہیں تو یہ اللہ کی نشانیوں  میں سے ایک نشانی ہے۔ سورج گرہن کے دوران نبی کریم ﷺ کے صاحبزادے کا اتنقال ہوا  تو لوگوں نے کہا کہ سورج گرہن کی وجہ سے آپ ﷺ کے صاحبزادے کا انتقال ہوا ہے۔ آپ ﷺ نے فرمایا کہ نہ کسی کی موت سے اس کا تعلق ہےاور نہ کسی کی زندگی سے اس کا تعلق ہے۔

مفتی نعیم نے اپنی گفتگو مکمل کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں اللہ تعالیٰ سے توبہ استغفار کرتے رہنا چاہیے، یہ کہا جاتا ہے کہ سورج گرہن سے حاملہ عورت کا حمل گرجاتا ہے، اس طرح کی باتیں رسومات ہیں جن کی اسلام میں کوئی گنجائش نہیں ہے۔

اس مختصر گفتگوکے بعد مفتی نعیم نے گفتگو کا سلسلہ منقطع کردیا، ٹیلی فونک گفتگو کے دوران واضح محسوس ہورہا تھا کہ ان کی طبیعت ناساز ہے، وہ بار بار کھانس رہے تھے اور رک رک کر گفتگو کر رہے تھے۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -