ایندھن کے حصول کیلئے جھڑپیں، لنکن فوج کی فائرنگ سے 7افرادزخمی

ایندھن کے حصول کیلئے جھڑپیں، لنکن فوج کی فائرنگ سے 7افرادزخمی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


کولمبو (این این آئی)سری لنکامیں ایندھن کے حصول کے لئے پٹرول پمپ پر موجود لوگ آپس میں گتھم گتھاہوگئے،فسادات پر قابو پانے کے لئے فوج کو طلب کرلیاگیا، بیس سے تیس افراد کے گروپ نے فوجی ٹرک پر پتھراؤ کرتے ہوئے اسے نقصان پہنچایا۔ ان جھڑپوں میں چار عام شہری اور تین فوجی زخمی ہوئے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے م طابق سری لنکن فوج کی جانب سے ایک پٹرول اسٹیشن پر فسادات پر قابو پانے کے لیے فائرنگ کرنے کی اطلاعات ہیں۔ جواب میں بیس سے تیس افراد کے گروپ نے فوجی ٹرک پر پتھراؤ کرتے ہوئے اسے نقصان پہنچایا۔ پولیس کے مطابق ان جھڑپوں میں چار عام شہری اور تین فوجی زخمی ہوئے ہیں۔ ان دنوں سری لنکا بھر میں پیٹرول اور ڈیزل کے حصول کے لیے کئی کئی کلومیٹر طویل قطاریں دیکھی جا رہی ہیں۔ سری لنکا حال ہی میں دیوالیہ ہو گیا تھا اور وہاں ایندھن کے ساتھ ساتھ اشیائے خور و نوش کی بھی قلت پیدا ہوتی جا رہی ہے۔ اگر صورتحال کو کنٹرول نہ کیا گیا تو خدشات ہیں کہ فسادات ملک کے طول و عرض میں پھیل سکتے ہیں۔دوسری طرف سری لنکا میں غذائی بحران شدید تر ہونے کے باعث فوج کاشتکاری مہم میں حصہ لے گی جس کے تحت 1500 ایکڑ بنجر زمین کو غذائی پیداوار بڑھانے کے لیے قابلِ کاشت بنایا جائے گا۔غیر ملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق سری لنکن آرمی نے گرین ایگریکلچر اسٹیئرنگ کمیٹی قائم کردی جو ملک کے فوڈ سیکیورٹی پروگرام پر عمل درآمد کرے گی۔سری لنکا میں جاری بدترین معاشی بحران کی وجہ سے غذا، ادویات، گھریلو گیس، ایندھن اور درجنوں اشیا کی قلت ہوگئی ہے۔کاشتکاری منصوبہ ہنگامی بنیادوں پر جولائی میں شروع کردیا جائے گا جس کی سربراہی لیفٹیننٹ جنرل ویکم لیاناگے کریں گے۔سری لنکن فوج کے چیف آف اسٹاف میجر جنرل جگت اس پورے منصوبے کی نگرانی کریں گے۔فوجی دستے پہلے بنجر زمین کی صفائی کریں گے، پھر ہل چلانے کے بعد زرعی ماہرین کے تجویز کردہ مختلف فصلوں کے بیج بوئیں گے۔سری لنکا میں موجود تمام آرمی ہیڈکوارٹرز اس مہم کو مکمل کرنے کے لیے اپنی اپنی فارمیشنز سے اہلکاروں کو روانہ کریں گے۔
سری لنکا

مزید :

صفحہ آخر -