ایلون مسک کے خلاف تنقیدی خط تحریر کرنے والے سپیس ایکس کے ملازمین کو بڑی سزا مل گئی

ایلون مسک کے خلاف تنقیدی خط تحریر کرنے والے سپیس ایکس کے ملازمین کو بڑی سزا ...
ایلون مسک کے خلاف تنقیدی خط تحریر کرنے والے سپیس ایکس کے ملازمین کو بڑی سزا مل گئی

  

نیویارک (ویب ڈیسک) راکٹ کمپنی سپیس ایکس نے ایلون مسک کے خلاف تنقیدی خط لکھنے پر کم از کم 5 ملازمین کو ملازمت سے نکال دیا ہے۔

نیویارک ٹائمز کی ایک رپورٹ میں اس معاملے سے واقف افراد کے حوالے سے بتایا گیا کہ سپیس ایکس کے سیکڑوں ملازمین کی جانب سے کمپنی کے عہدیداران کے نام ایک کھلے خط میں ایلون مسک پر تنقید کی گئی تھی۔جیو نیوز کے مطابق  اس خط کے بعد سپیس ایکس نے 16 جون کو 5 ملازمین کو برطرف کردیا۔

سپیس ایکس نے ملازمین کو نکالنے کی رپورٹ پر کوئی ردعمل ظاہر نہیں کیا ہے۔

نیویارک ٹائمز کے مطابق سپیس ایکس کی صدر گیوین شاٹ ویل نے ایک ای میل میں کہا کہ کمپنی کی جانب سے خط کے معاملے پر تحقیقات کی جارہی ہے اور اس میں شامل ملازمین کو برطرف کیا گیا ہے۔گیوین شاٹ ویل نے کہا کہ جن ملازمین کو نکالا گیا ہے انہوں نے عملے کے دیگر افراد پر خط پر دستخط کے لیے دباؤ ڈالا تھا۔

اس خط میں ملازمین کی جانب سے سپیس ایکس کے بانی ایلون مسک کے رویے کو کمپنی کے لیے شرمندگی کا باعث کہا گیا تھا۔اس خط کو سپیس ایکس کے ملازمین نے کمپنی کی ایک گروپ چیٹ میں شیئر کیا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -سائنس اور ٹیکنالوجی -