شدت پسند پاکستانی حدود سے افغانستان پر حملہ کرتے ہیں : امریکی کانگریس

شدت پسند پاکستانی حدود سے افغانستان پر حملہ کرتے ہیں : امریکی کانگریس
شدت پسند پاکستانی حدود سے افغانستان پر حملہ کرتے ہیں : امریکی کانگریس

  


واشنگٹن( مانیٹرنگ ڈیسک)امریکہ سے آئیڈیل تعلقات کے خواب دیکھنے والے پاکستان پر امریکی کانگریس کا ایمان مطبوط نہیں ہوسکا اور اس کی طرف سے پاکستان پر بد اعتمادی اور الزامات کا سلسلہ جاری ہے ۔ ایشیا، بحرالکاہل اور مشرق وسطیٰ کے لیے امریکی کانگریس کی ذیلی کمیٹی کے اجلاس میں کانگریس ارکان نے الزام عائد کیا کہ شدت پسند پاکستانی علاقوں سے افغانستان میں حملے کرتے ہیں۔ رکن کانگریس ایلینا روز نے کہا کہ پاکستان امریکی امداد چاہتا ہے تو دہشت گردی کے خلاف مزید کام کرنا ہوگا۔ ایک اور رکن ٹیڈ ڈیوچ نے کہا کہ افغانستان میں استحکام کے لیے پاکستان سے پائیدار تعلقات ضروری ہیں ۔ پاکستان کو دہشت گردوں کی کمین گاہیں ختم کرنا ہوں گی۔ ری پبلکن رکن سٹیو کیبوٹ کا کہنا تھا کہ پاکستان نے امداد کے بدلے امریکا کو کچھ نہیں دیا۔ ڈانا رورابیکر نے الزام عائد کیا کہ پاکستان امریکا کا اتحادی نہیں بلکہ دشمن ہے اور اس نے یہ بات بارہا ثابت کی ہے۔

مزید : بین الاقوامی