’جیسے ہی اس نے خدا حافظ کہنے کیلئے ہاتھ ہلایا قیامت آ گئی‘

’جیسے ہی اس نے خدا حافظ کہنے کیلئے ہاتھ ہلایا قیامت آ گئی‘
’جیسے ہی اس نے خدا حافظ کہنے کیلئے ہاتھ ہلایا قیامت آ گئی‘

  

انقرہ(مانیٹرنگ ڈیسک) گزشتہ روز ترکی کے شہر استنبول میں خودکش دھماکے میں 5افراد موت کے گھاٹ اتر گئے۔ اس دھماکے کی سی سی ٹی وی فوٹیج سامنے آنے پر کئی انتہائی دلخراش مناظر دیکھنے کو ملے۔ ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ ایک خاتون اپنی دوست کو ہاتھ ہلا کر خدا حافظ کہہ رہی تھی کہ اسی اثناءمیں اس سے چند میٹر کے فاصلے پر خودکش حملہ آور نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا اور اپنی دوست سے عارضی طور پر الگ ہوتی ہوئی خاتون اسے ہمیشہ کے لیے چھوڑ کر چلی گئی۔ برطانوی اخبار ڈیلی میل کی رپورٹ کے مطابق یہ دونوں خواتین شاپنگ کے بعد ہنسی مذاق کرتی ہوئی شاپنگ مال سے باہر آ رہی تھیں۔ پھر وقوعہ کی جگہ پر آ کر ایک دوسرے سے الگ ہو گئے اور تھوڑے فاصلے پر اسے ہاتھ ہلا کر خدا حافظ کہا اور پھر موت کو گلے لگا لیا۔ رپورٹ کے مطابق جاں بحق ہونے والے 5افراد میں 2امریکی شہری شامل ہیں۔ امریکی وائٹ ہاﺅس نے بھی اپنے دو شہریوں کی ہلاکت کی تصدیق کر دی ہے۔

وائٹ ہاﺅس کے مطابق جاں بحق ہونے والے یہ دونوں افراد دوہری شہریت کے حامل تھے۔ وہ امریکہ کے ساتھ ساتھ اسرائیل کے بھی شہری تھے۔ وائٹ ہاﺅس کے شعبہ نیشنل سکیورٹی کونسل کے ترجمان نیڈ پرائس(Ned Price) کا کہنا تھا کہ ”ہم ترک حکام کے ساتھ قریبی رابطے میں ہیں اور ہم عہد کرتے ہیں کہ ترکی کے ساتھ مل کر دہشت گردی کے خلاف جنگ جاری رکھیں گے۔“رپورٹ کے مطابق جاں بحق ہونے والے دیگر افراد میں ایک ایرانی شہری بھی شامل تھا۔ میڈیا رپورٹس میں بتایا جا رہا ہے کہ یہ حملہ داعش کے شدت پسند نے کیا تاہم استنبول کے گورنر واسب ساہین(Vasip Sahin) نے ان میڈیا رپورٹ کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ ”تاحال یہ تصدیق نہیں ہو سکی کہ حملہ آور کا تعلق داعش سے تھا۔ اس حوالے سے تحقیقات ہو رہی ہیں اور رپورٹ آنے کے بعد ہی کوئی حتمی رائے قائم کی جا سکتی ہے۔“

مزید :

بین الاقوامی -